.

لندن میٹرو کے مشتبہ دہشت گرد کی گرفتاری کی متضاد اطلاعات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانیہ کے دارالحکومت لندن میں کے علاقے فلہم میں زیرِ زمین ٹرین میں دھماکہ خیز مواد پھٹنے سے متعدد افراد زخمی ہوئے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر یہ دیسی ساختہ بم صحیح طریقے سے پھٹتا تو بڑے پیمانے پر تباہی ہو سکتی تھی۔ دوسری جانب بعض ذرائع ابلاغ یہ دعویٰ کررہے ہیں کہ پولیس نے مشتبہ حملہ آور کو حراست میں لے لیا ہے۔

پولیس کے مطابق یہ دھماکہ جمعہ کی صبح جنوب مغربی لندن میں پارسنز گرین کے سٹیشن پر موجود ڈسٹرکٹ لائن کی ایک ٹرین پر ہوا۔ طبی حکام کے مطابق اس دھماکے میں 29 افراد زخمی ہوئے ہیں۔

سکاٹ لینڈ یارڈ نے کہا ہے کہ اس واقعے کو دہشت گردی کی کارروائی کے طور پر دیکھا جا رہا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ اب تک کی اطلاعات کے مطابق دھماکے کا مقصد زیادہ لوگوں کو ہلاک کرنا تھا لیکن یہ بم صحیح طرح پھٹ نہیں سکا۔

ماہرین کے مطابق بظاہر دیسی ساختہ بم پھٹا نہیں ہے بلکہ اس میں آگ لگی ہے لیکن اگر اس میں دھماکہ ہوتا تو بڑی تعداد میں لوگ ہلاک اور زخمی ہو سکتے تھے کیونکہ اسے اسی نیت سے تیار کیا گیا تھا۔

سوشل میڈیا پر پوسٹ کی جانے والی ایک تصویر میں ٹرین کے فرش پر شاپنگ بیگ کے اندر ایک سفید بالٹی میں لگی آگ دیکھی جا سکتی ہے، تاہم بظاہر ریل کے ڈبے کو زیادہ نقصان نہیں پہنچا ہے۔

عینی شاہدین نے کہا ہے کہ انھوں نے کم از کم ایک مسافر کے چہرے پر زخم دیکھے ہیں جبکہ واقعے کے بعد لوگوں کو افراتفری کے عالم میں ٹرین سے اترتے بھی دیکھا گیا ہے۔

اس ٹرین کے ایک مسافر کرس ولڈش نے بی بی سی ریڈیو فائیو لائیو کو بتایا کہ انھوں نے ایک بالٹی دیکھی جس سے کچھ شعلے بلند ہو رہے تھے اور وہ بوگی کے پچھلی طرف دروازے کے قریب پڑی تھی۔

مشتبہ ملزم کی شناخت یا گرفتاری

لندن میٹرو ٹرین میں ہونے والے دھماکے کے بارے میں مختلف ذرائع سے خبریں آ رہی ہیں۔ پولیس کی بھاری نفری نے علاقے کو اب بھی گھیرے میں لے رکھا ہے۔ اس ضمن میں سب سے اہم خبر ’Sky News‘ کی ہے۔ اسکائی نیوز نے سیکیورٹی ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ پولیس نے مشتبہ حملہ آور کی شناخت تو کرلی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ حملے کے منصوبہ ساز کی شناخت مختلف مقامات پر لگے سی سی ٹی وی کیمروں کی مدد سے کی گئی ہے تاہم پولیس نے باضابطہ طور پر اس خبر کی تصدیق نہیں کی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے واقعے کی تحقیقات کے حوالے سے ہونے والی پیش رفت کا جائزہ لیا ہے۔ اس دوران ایک خبر اخبار ’برمنگھم میل‘ نے دی ہے۔ اخبار کی ویب سائیٹ پر پوسٹ ایک خبر میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ پولیس نے نیو اسٹریٹ اسٹیشن سے ایک شخص کو گرفتار کیا ہے۔ اس کے ہاتھ میں ایک چاقو دیکھا گیا ہے تاہم برمنگھم پولیس کی طرف سے مشتبہ ملزم کی گرفتاری کی خبر کی تصدیق یا تردید نہیں کی ہے۔ البتہ پولیس کی طرف سے آنے والے بیانات میں صرف یہی کہا گیا ہے کہ وہ معاملے کی تہہ تک جانے کی کوشش رہے ہیں۔