.

قومی دن پررنگا رنگ ثقافتی سرگرمیاں، شاہ فہد اسٹیڈیم میں جم غفیر

شہری اپنے خاندانوں کے ساتھ تفریحی سرگرمیاں دیکھنے آئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے 87 ویں قومی دن کی تقریبات کے موقع پرریاض میں قائم شاہ فہد اسٹیڈیم میں ہونے والے ایک فٹ بال میچ اور دیگر ثقافتی سرگرمیوں کے دوران بڑی تعداد میں سعودی شہری اسٹیڈیم میں آئے۔ اسٹیڈیم تماشائیوں سے کھچا کھچ بھرگیا۔ میچ دیکھنے اور دیگر رنگا رنگ تقریبات میں میں دلچسپی رکھنے والوں میں خواتین، بچے اور جوان سب شامل تھے۔ شہری خاندانوں کی شکل میں بھی فٹ بال سے لطف اندوز ہونے آئے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق دارالحکومت ریاض کے شاہ فہد اسٹیڈیم میں فٹ بال میچ جیسی صحت مند سرگرمی کا اہتمام جنرل تفریحی باڈی اور جنرل اسپورٹس اتھارٹی نے مشترکہ طور پر کر رکھا تھا۔

یہ پہلا موقع ہے کہ جب سعودی عرب میں کسی فٹ بال میچ کو ٹی وی پر براہ راست دکھایا گیا ہے۔ میچ شروع ہونے سے قبل ہی اسٹیڈیم تماشائیوں سے بھر گیا تھا۔ بڑی تعداد میں شہری خاندانوں کی شکل میں میچ دیکھنے آئے۔

انتظامیہ نے خاندان کی شکل میں آنے والے شہریوں کے گراؤنڈ میں داخلے کے لیے ’شاہی گیٹ‘ مختص کیا گیا تھا جب کہ انفرادی شکل میں آنے والے تماشائی گیٹ نمبر ایک، دو اور تین سے داخل ہوئے۔

اسٹیڈیم یں خواتین، فیملیوں کے لیے الگ اور مردوں کے لیے الگ جگہ مختص کی گئی تھی۔ گراؤنڈ میں آنے والے تماشائیوں کی تعداد ہزاروں میں ہوسکتی ہے کیونکہ شاہ فہد اسٹیڈیم میں چالیس ہزار فراد کے بیٹھنے کی گنجائش موجود ہے۔ تماشائیوں کے لیے ہر طرح کی سہولیات کی فراہمی کے ساتھ معذور اور مخصوص افراد کے لیے الگ سے جگہ بنائی گئی تھی۔ مہمانوں کی آمد کا سلسلہ مقامی وقت کے مطابق شام چار بجے تک جاری رہا۔ اس کے بعد گیٹ بند کردیے گئے تھے۔ تماشائیوں کے لیے کھانے الگ جگہ مختص کی گئی۔

کھیل کود کی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ دیگر ثقافتی تقریبات بھی منعقد کی گئیں جن میں 500 اداکاروں نے حصہ لیا۔ ثقافتی سرگرمیوں کے لیے تین گروپ بنائے گئے تھے جنہوں نے سعودی عرب کے شاندار ماضی، حال اور مستقبل کے حوالے سے مخصوص انداز میں اداکاری کے جوہر دکھائے۔ تقریبات کا آغاز دعائے ابراہیم السلامم سےہوا۔ اس کے بعد ولادت اسلام، مملکت سعودی عرب کی وحدت، شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کے دور میں ملک کی تعمیرو ترقی اور مستقبل کے ویژن پر خصوصی پروگرامات کیے گئے۔