.

خواتین کو ڈرائیونگ کی اجازت، امریکا کا فیصلے کا خیر مقدم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کی جانب سے ملک میں خواتین کی ڈرائیونگ پر عاید پابندی ختم کرنے کے فیصلے پر عالمی سطح پر مثبت رد عمل سامنے آیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق امریکی وزارت خارجہ نے شاہ سلمان کے فیصلے کو عظیم قدم اور درست سمت میں اہم پیش رفت قرار دیا ہے۔

امریکی وزارت خارجہ کی ترجمان ھیذر نویرٹ نے واشنگٹن سے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ’بلا شبہ ہم شاہ سلمان کے تاریخی فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں۔ یہ ایک عظیم قدم ہے اور درست سمت میں غیرمعمولی اہمیت کا حامل فیصلہ ہے‘۔

خیال رہے کہ سعودی عرب میں خواتین کے گاڑی چلانے کا معاملہ ایک عرصےسے وجہ نزاع چلا آ رہا تھا۔ ملک میں خواتین کو گاڑی چلانے کی قانونی اجازت نہ ہونے کے باعث اکثر خواتین کو گاڑی چلانے کی پاداش میں گرفتار ہونا پڑتا تھا۔

شاہ سلمان کی جانب سے خواتین کی ڈرائیونگ پر عاید پابندی اٹھنے کے بعد وزارت داخلہ، خزانہ، وزارت محنت اور سماجی بہبود پر مشتمل ایک اعلیٰ سطحی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جو خواتین کے گاڑی چلانے کے شاہی فرمان پر عمل درآمد کے انتظامات کو یقینی بنائے گی۔

شاہی فرمان کے بعد یہ کمیٹی تیس روز میں اپنی سفارشات مرتب کرے گی اور اس پر عمل درآمد کے لیے 10/10/1439 تک عمل درآمد شروع کیا جائے گا۔