.

جدہ کے ہوائی اڈے پر ایک کروڑ عمرہ زائرین کی آمد ورفت کے لیے انتظامات مکمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے ساحلی شہر جدہ کے شاہ عبدالعزیز بین الاقوامی ہوائی اڈے پر آیندہ عمرہ سیزن کے دوران میں ایک کروڑ سے زیادہ زائرین کی آمد ورفت کے لیے تمام انتظامات مکمل کر لیے گئے ہیں۔

نئے عمرہ سیزن کا گذشتہ ہفتے کے روز سے آغاز ہوا ہے اور یہ 18 شوال 1439 ہجری ( 2جولائی 2018ء) تک جاری رہے گا۔اس ہوائی اڈے پر ایک گھنٹے میں آنے والے 1800 مسافروں اور بیرون ملک روانہ ہونے والے 1700 مسافروں کو ٹھہرانے کی گنجائش موجود ہے۔

اس کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ہوائی اڈے پر دنیا بھر سے آنے والے عمرہ زائرین کو 27 سرکاری اور نجی محکمے مختلف نوعیت کی خدمات مہیا کریں گے۔اس کے ڈائریکٹر معلومات اور تعلقات عامہ ترکی بن ملاوی الدیب نے بتایا ہے کہ بیرون ملک سے آمد کے وقت عمرہ زائرین سات لاؤنجز استعمال کریں گے۔اسی طرح وہ واپسی کے وقت اتنے ہی لاؤنجز استعمال کریں گے۔سعودی عرب کے تمام متعلقہ محکمے انھیں ہر ممکن بہترین خدمات مہیا کریں گے۔

اس ہوائی اڈے کے تاج ٹرمینل کا کل رقبہ 5 لاکھ 10 ہزار مربع میٹر ہے۔یہ مشرقی لاؤنجز پر مشتمل ہے اور ان کا رقبہ 90 ہزار مربع میٹر ہے۔اس کے علاوہ مشرقی پلازا کی کھلی جگہ ہے جس کا رقبہ ایک لاکھ 60 ہزار مربع میٹر ہے۔

اس ٹرمینل میں طیاروں کو کھڑا کرنے کے لیے 26 مخصوص جگہیں ہیں۔10 موبائل پُل ہیں،دو آپریشن سنٹر ، روانگی کے لیے 18 دروازے اور زائرین کے لیے 14 لاؤنج ہیں۔مسافروں کے لیے 254 کاؤنٹر اور پاسپورٹس کی جانچ اور ان پر مہریں لگانے کے لیے 143 کاؤنٹر ہیں۔ اس ٹرمینل میں 123 کمروں پر مشتمل ایک ہوٹل ہے۔ ایک چین کے متعدد ریستوراں ہیں، 32 طہارت خانے ہیں اور نماز کے لیے40 جگہیں مختص ہیں ۔