.

جی سی سی کے سیکریٹری جنرل نے قطری میڈیا کے کونسل پر حملوں کی مذمت کردی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

خلیج تعاون کونسل (جی سی سی ) کے سیکریٹری جنر ل عبد اللطیف الزیانی نے قطری میڈیا کے بعض ذرائع کے غیر ذمے دارانہ طرز عمل اور کونسل پر حملوں کی مذمت کردی ہے۔انھوں نے قطر کے بعض خبری اداروں کی جانب سے جی سی سی کے خلاف مہم کو غیر منصفانہ قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ وہ تمام روایات ، اقدار اور میڈیا کی پیشہ واریت کی حدود سے تجاوز کررہے ہیں۔

عبداللطیف الزیانی نے منگل کو ایک بیان میں قطری میڈیا کے بعض ذرائع کی جانب سے اس کوشش پر حیرت کا اظہار کیا ہے جس میں انھوں نے جی سی سی کے سیکریٹری جنرل کو خلیج بحران کے حل کا ذمے دار ٹھہرایا ہے۔

انھوں نے کہا ہے کہ ’’ قطری حکومت اور قطری میڈیا کے ذمے داران اس بات سے مکمل طور پر آگاہ ہیں کہ بحران کا حل ان کے اپنے عالی قدر ، عزت مآب اور صاحبان ذی وقار کے ہاتھ میں ہے اور یہ کسی بھی طرح سیکریٹری جنرل کی ذمے داری ہے اور نہ اس کے فرائض میں شامل ہے۔وہ سپریم کونسل اور وزارتی کونسل کے احکام کو وصول کرتا ہے اور ان پر عمل درآمد کراتا ہے۔وہ خلیج تعاون کونسل کے منشور میں دی گئی تصریحات کے مطابق ا پنے فرائض انجام دینے کا پابند ہے‘‘۔

جی سی سی کے سیکریٹری جنرل نے قطر کے بعض صحافیوں کی جانب سے بحران کو ان کی بحرین کی شہریت سے جوڑنے پر بھی ناپسندیدگی کا اظہار کیا ہے۔انھوں نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ وہ جی سی سی کے نظم کے تحفظ کے لیے سپریم کونسل کی تفویض کردہ ذمے داریوں کو بہ طریق احسن انجام دیتے رہیں گے‘‘۔

انھوں نے قطری میڈیا پر زوردیا ہے کہ ’’وہ خلیجی ممالک کے درمیان برادرانہ تعلقات کی بحالی میں رکاوٹیں حائل کرنے یا کسی قسم کا رخنہ ڈالنے سے باز آجائے کیونکہ اس سے امیر ِکویت شیخ صباح الاحمد الجابر الصباح کی بحران کے حل کے لیے مصالحتی کوششیں بھی متاثر ہوں گی‘‘۔