.

میزائلوں کے حجم اور رینج میں اضافے کی ایرانی دھمکی

امریکی پابندیوں کا جواب میزائل پروگرام میں جدت سے دیا جائے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایرانی پاسداران انقلاب کے سربراہ محمد علی جعفری نے دھمکی دی ہے کہ ان کا ملک بیلسٹک میزائلوں کے حجم اور ان کے مار کرنے کے فاصلے کی رینج میں اضافے پر کام جاری رکھے گی۔ ان کا کہنا ہے کہ اگر ایران پر امریکا کی طرف سے مزید اقتصادی پابندیاں عاید کی گئیں تو ہم اس کا جواب میزائلوں کی رینج اور حجم میں اضافے کی صورت میں دیں گے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ایرانی پاسداران انقلاب کے سربراہ نے یہ دھمکی امریکا کی ایران بارے نئے حکمت عملی کے دو ہفتوں کے بعد جاری کیا ہے۔

خبر رساں ادارے ’تسنیم‘ کے مطابق ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جنرل محمد علی جعفری نے بیلسٹک میزائلوں کو ملک کے دفاع کا شرف اور عزت قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں معلوم ہے کہ پاسداران انقلاب امریکی پابندیوں کا سامنا کرے گا۔ ہم ان پابندیوں کا وقت پر مناسب جواب دیں گے۔

خیال رہے کہ امریکا کی طرف سے نئی پابندیوں کے امکان پر بات کرنے والے یہ واحد ایرانی عہدیدار نہیں بلکہ ایرانی عسکری اور سیاسی قیادت اس وقت سے امریکی پابندیوں کی بات کرتی چلی آرہی ہے جب سے ڈونلڈ ٹرمپ نے اقتدار سنبھالا ہے۔

بیلسٹک میزائلوں کی رینج بڑھانے سے متعلق بات کرتے ہوئے جنرل محمد علی جعفری نے کہا کہ اس وقت تہران کے پاس موجود بیلسٹک میزائلوں کی رینج 2000 کلو میٹر تک ہے مگر ان کی مار کرنے کی صلاحیت اور فاصلے میں اضافہ ممکن ہے۔ ایران اپنے میزائل پروگرام کی صلاحیت کو بہتر بنانے پر کام جاری رکھے گا کیونکہ ہمارے پاس امریکا کی ناجائز اور غیرقانونی پابندیوں کا اس کے سوا اور کوئی راستہ نہیں۔