.

’حریری کے استعفے کے بعد لبنان کی پوزیشن پہلے جیسی نہیں رہی‘

کسی ملک کو سعودیہ کے خلاف استعمال نہیں کرنے دیں گے: السبھان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے وزیر برائے خلیجی امور ثامر السبھان نے کہا ہے کہ سعد حریری کے وزارت عظمیٰ سے استعفے کے بعد لبنان کی حیثیت پہلے جیسی نہیں رہی۔

ان کا کہنا ہے کہ کسی ملک کو ہمارے ملکوں کے خلاف دہشت گردی کی لانچنگ کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ لبنان کی قیادت کو فیصلہ کرنا ہوگا کہ انہیں امن کے ساتھ رہنا ہے یا دیشت گردوں کی حمایت کرنا ہے۔

مائیکرو بلاگنگ ویب سائیٹ ’ٹویٹر‘ پر پوسٹ کی گئی متعدد ٹویٹس میں ثامر السبھان نے کہا کہ مستعفی لبنانی وزیراعظم سعد حریری کے ذاتی محافظوں کے پاس حریری کے قتل کی سازش کی ٹھوس معلومات ہیں۔

قبل ازیں لبنان کے المستقبل ٹی وی کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں ثامر السبھان نے کہا کہ مستعفی وزیراعظم کی جان کو خطرات لاحق تھے۔ سعودی عرب سعد حریری کی سلامتی اور حفاظت کا متمنی ہے۔

خیال رہے کہ لبنانی وزیراعظم سعد حریری نے گذشتہ ہفتے کے روز سعودی عرب میں استعفیٰ دے دیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ خطے کی طرف ایران کے بڑھنے والے ہاتھ کاٹ دیئے جائیں گے۔