.

سعودی کابینہ کا جامعات اور اسکولوں میں ’’خواتین دہشت گردی‘‘ پر اظہارِ تشویش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی کابینہ نے جامعات اور اسکولوں میں خواتین (طالبات) کی دہشت گردی کی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے خطرے پر غور کیا ہے اور خواتین کو دہشت گردی اور انتہا پسندی کی کارروائیوں سے بچانے کی ضرورت پر زوردیا ہے۔

سعودی کابینہ کا اجلاس خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز کے زیر صدارت الیمامہ محل الریاض میں ہوا۔سعودی کابینہ نے تیونس میں منعقدہ عرب انسداد دہشت گردی اجلاس کے کامیاب انعقاد کا خیر مقدم کیا ہے۔اس اجلاس میں خواتین کی دہشت گردی کے مسئلے پر غور کیا گیا تھا۔

اجلاس کے آغاز میں شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے کابینہ کو اپنی فلسطینی صدر محمود عباس اور لبنان کے المارونیہ عیسائی فرقے کے سربراہ بشارہ بطرس الراعی سے ملاقاتوں کے بارے میں بتایا۔

سعودی کابینہ نے بحرین میں تیل کی ایک پائپ لائن پر حالیہ بم حملے کے بعد آگ کے واقعے کی مذمت کی اور مملکت کی جانب سے بحرین کی سلامتی اور خود مختاری کی حمایت کا اعادہ کیا ہے۔