.

مقتول علی صالح آبائی شہر میں سپرد خاک: ذرائع

جنازے میں بیٹےاور بھتیجے سمیت 20 افراد کی شرکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے مقتول سابق صدر علی عبداللہ صالح کے خاندان ذرائع نے ’العربیہ‘ نیوز چینل کو بتایا ہے کہ حوثی باغیوں نے علی صالح کو ان کے آبائی علاقے الاحمر میں سپرد خاک کردیا گیا ہے۔

خاندان ذرائع کا کہنا ہے کہ علی صالح کی تدفین کے وقت ان کے چند ایک قریبی عزیز شریک تھے۔ ان میں مقتول صدر کا بیٹا مدین، بھتیجا محمد محمد صالح، پارلیمنٹ کے اسپیکر یحییٰ الراعی اور حوثی لیڈر علی ابو الحاکم بھی شریک تھے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ علی صالح کے جنازے کے شرکاء کی تعداد 20 تھی۔

خیال رہے کہ علی عبداللہ صالح کو گذشتہ سوموار کوحوثی باغیوں نے جنوبی صنعاء میں سنحان کے مقام پر اپنے آبائی علاقے کی طرف سےجاتے ہوئے فائرنگ کر کے قتل کردیا تھا۔ اس کے بعد مقتول صدر کا جسد خاکی ایران نواز حوثی باغیوں کے قبضے میں تھا۔