.

یمنی فوج الحدیدہ صوبے کی تیسری گورنری تک پہنچ گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں سرکاری فوج ملک کے مغربی صوبے الحدیدہ کی تیسری گورنری تک پہنچ گئی ہے۔

یمن کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے ہفتے کی شب بتایا کہ یمنی فوج نے "حیس الخوخہ" کے تکون پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے اور وہ التحیتا گورنری میں داخل ہونے میں کامیاب ہو گئی۔

عسکری ذرائع کے مطابق یمنی فوج نے حیس شہر کا گھیراؤ کر لیا ہے جو الخوخہ شہر سے 10 کلومیٹر کی دُوری پر واقع ہے۔

مغربی ساحل پر یمنی فوج کی پیش قدمی کا سلسلہ جاری ہے اور گزشتہ تین روز کے دوران تزویراتی نوعیت کی کامیابیاں حاصل ہوئی ہیں۔ عرب اتحاد کی معاونت سے جاری معرکوں میں باغی حوثی ملیشیا تیزی کے ساتھ ڈھیر ہو رہی ہے۔ میدانی ذرائع کا کہنا ہے کہ اس دوران حوثی ملیشیا کے درجنوں ارکان ہلاک اور زخمی ہوئے جب کہ بقیہ عناصر فرار ہو گئے۔

یاد رہے کہ حوثی ملیشیا آئینی حکومت کا تختہ اُلٹنے کے بعد تین برس سے الحدیدہ صوبے پر قابض ہے۔ اس دوران اس کے مغربی ساحل کو ایران سے آنے والے اسلحے کی اسمگلنگ کے واسطے استعمال کیا گیا۔ الحدیدہ کی تزویراتی بندرگاہ یمنیوں کے خلاف جنگ جاری رکھنے کے لیے حوثیوں کی اقتصادی سپورٹ کے علاوہ امدادی سامان کی لُوٹ مار اور بین الاقوامی جہاز رانی کو دھمکانے کا ذریعہ ہے۔