.

حوثی ملیشیا کے جازان کے علاقے میں راکٹ حملے میں ایک سعودی لڑکا جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے یمن کی سرحد کے ساتھ واقع علاقے جازان کی العرضہ گورنری میں حوثی ملیشیا کے داغے گئے ایک راکٹ کا ٹکڑا لگنے سے ایک چودہ سالہ لڑکا جاں بحق ہوگیا ہے۔

سعودی عرب کے محکمہ شہری دفاع کے مطابق راکٹ کا ایک ٹکڑا اس لڑکے کے مکان کے نزدیک گرا تھا۔اس سے وہ شدید زخمی ہوگیا تھا اور بعد میں اپنے زخموں کی تاب نہ لا کر چل بسا ہے۔اس کی شناخت حامد جذمی کے نام سے کی گئی ہے اور وہ انٹرمیڈیٹ کا طالب علم تھا۔

شہری دفاع کی فورسز کا کہنا ہے کہ یہ راکٹ یمن کے علاقے سے حوثیوں نے جازان کی جانب داغا تھا اور اس کے ٹکڑے لگنے سے متعدد اور افراد زخمی ہوئے ہیں مگر انھوں نے ان زخمیوں کی تعداد نہیں بتائی ہے۔