.

ایپل اور ایمازون کی سعودی عرب میں کاروبار کی خواہش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی جانب سے مملکت کے ہائی ٹیک مستقبل کے وژن کے تحت دنیائے ٹیکنالوجی کے دو سب سے معروف نام 'ایپل' اور 'ایمازون' ریاض میں سرمایہ کاری کے لئے لائسنس کے حصول کے خواہاں ہیں۔

سعودی عرب سے شائع ہونے والے روزنامے سعودی گزٹ کے مطابق ایپل سعودی عرب میں غیر ملکی سرمایہ کاری کے ذمہ دار ادارے سے بات چیت میں مصروف ہے۔

یہ دونوں کمپنیاں ایک مڈل پارٹی کی وساطت سے سعودی عرب میں اپنی مصنوعات فروخت کررہی ہیں مگر انہوں نے اب ولی عہد کے وژن کی اہمیت کو بھانپتے ہوئے مملکت میں براہ راست سرمایہ کاری کا فیصلہ کیا ہے۔

ایمازون کی جانب سے مذاکرات میں کمپنی کی 'ایمازون ویب سروسز' ڈویژن نمائندگی کررہی ہے۔

سعودی حکومت غیر ملکی سرمایہ کاری کے رجحان کو بڑھانے کے لئے گزشتہ دو سالوں سے پالیسیوں میں تبدیلیاں لارہی ہے تاکہ غیر ملکی کمپنیاں سعودی عرب کی مارکیٹ میں داخل ہوسکیں۔

ایک محتاط اندازے کے مطابق ماہ فروری تک ایپل کے ساتھ معاہدہ طے پا جائے گا جس کے بعد کمپنی مملکت میں اپنی سرگرمیوں کا آغاز کرسکے گی۔ ایمازون کمپنی کے مذاکرات ابھی ابتدائی مراحل میں ہیں اور اس وقت کسی معاہدے کی تاریخ کا تعین ممکن نہیں ہے۔