.

نئی دہلی میں گوشت کی کھلے عام فروخت یا نمائش پر پابندی کا خدشہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بھارتی دارالحکومت نئی دہلی کی مقامی انتظامیہ نے شہر بھر میں گوشت یا نان ویج اشیاء کی کھلے عام فروخت کا بل منظور کر لیا ہے جس کو جلد ہی باضابطہ طور پر منظور کر لیا جائے گا۔

بھارتی روزنامے ہندوستان ٹائمز کے مطابق بھارت کی قدامت پسند پارٹی بی جے پی کے زیر انتظام سائوتھ دہلی میونسپل کارپوریشن کی جانب سے ایک قرارداد منظور کی گئی ہے جس کے تحت صفائی ستھرائی اور انسانی جذبات کے تحفظ کی خاطر نان ویج اشیاء کی کھلے عام فروخت پر پابندی لگا دی جائے گی۔

اس قرارداد کی منظوری کے بعد یہ تجویز بل کی صورت میں 3 جنوری کو اگلی میٹنگ کے موقع پر پیش کی جائے گی تاکہ اس کو قانون کا حصہ بنایا جاسکے۔

یاد رہے کہ اس سے پہلے بھارت میں گوشت کی فروخت اور گائے ذبح کرنے کے معاملے پر انتہاپسند ہندوئوں نے کئی مسلمانوں کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا تھا جس کے نتیجے میں کئی افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے تھے۔