.

سیناء:مصری فورسز کے ساتھ جھڑپ میں آٹھ مشتبہ جنگجو ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کی سکیورٹی فورسز نے شورش زدہ علاقے جزیرہ نما سیناء میں منگل کے روز ایک جھڑپ میں آٹھ مشتبہ جنگجوؤں کو ہلاک کردیا ہے۔

مصر کی وزارت داخلہ نے اطلاع دی ہے کہ سکیورٹی فورسز نے شمالی سیناء کے دارالحکومت العریش شہر میں مشتبہ جنگجوؤں کے ایک ٹھکانے پر چھاپا مار کارروائی کی تو انھوں نے جوابی فائرنگ شروع کردی تھی۔اس کے بعد ان کے درمیان جھڑپ ہوئی ہے۔

اس نے مزید کہا ہے کہ جنگجو اپنی اس خفیہ کمین گاہ میں بیٹھ کر سکیورٹی فورسز پر حملوں کی منصوبہ بندی کررہے تھے۔ان کے ٹھکانے سے دھماکا خیز مواد ، بندوقیں اور ہتھیار بھی برآمد ہوئے ہیں۔

واضح رہے کہ جولائی 2013ء میں مصر کے پہلے منتخب صدر محمد مرسی کی حکومت کے خاتمے کے بعد سے داعش سے وابستہ گروپ صوبہ سیناء نے اس علاقے میں سرکاری سکیورٹی فورسز پر بیسیوں تباہ کن بم حملے کیے ہیں۔شمالی سیناء میں داعش کے علاوہ متعدد اور جنگجو گروپ بھی گذشتہ کئی برسوں سے مصری سکیورٹی فورسز کے خلاف برسرپیکار ہیں اور ان جنگجو گروپوں کے حملوں میں سیکڑوں فوجی اور پولیس اہلکار ہلاک ہوچکے ہیں۔