.

قطری ایجنٹوں پر ری پبلکن پارٹی کے مالی امور کے ذمے دار کا ای میل اکاؤنٹ ہیک کرنے کا الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کی حکمراں جماعت ری پبلکن پارٹی کے مالی امور کے ایک ذمے دار ایلیٹ بر ائیڈی نے قطر سے تعلق رکھنے والے ایجنٹوں پر اپنی ذاتی ای میل کو ہیک کرنے کا الزام عاید کیا ہے۔

ایلیٹ برائیڈی ری پبلکن نیشنل کمیٹی کے ڈپٹی فنانس چئیرمین ہیں ۔انھوں نے الزام عاید کیا ہے کہ ان کی ای میل کو ہیک کر لیا گیا اور اس میں دستاویزات کے تین سیٹ حاصل کرکے امریکی میڈیا کے ذرائع کو تقسیم کر دیے گئے ہیں۔

انھوں نے واشنگٹن میں متعیّن قطری سفیر کو ایک خط لکھا ہے اور اس میں قطر پر الزام عاید کیا ہے کہ اس نے ’’ میز کے نیچے سے غیرملکی ایجنٹوں ‘‘ کو رقوم ادا کی تھیں۔وہ اپنے خط میں لکھتے ہیں :’’ مجھے اور میرے ساتھ کام کرنے والے افراد نے ان امریکی شہریوں اور غیرملکی ایکٹروں کا پتا چلا لیا ہے جن کی آپ کی حکومت نے خدمات حاصل کی تھیں اور انھیں ان کارروائیوں کی ہدایت کی تھی‘‘۔

وہ اس خط میں مزید لکھتے ہیں :’’ آپ کے ایجنٹوں نے غیر قانونی چینلوں کے ذریعے ، دوسرے اداروں کے نام پر فنڈز منتقل کیے تھے اور غیر رجسٹر لوگوں کی خدمات حاصل کی تھیں۔آپ کے ایجنٹوں ، ان کے نگرانوں اور آپ کی حکومت نے قانون نافذ کرنے والے حکام کے علاوہ دفاع اور انٹیلی جنس کمیونٹی کو اپنی ذمے داریوں کے لیے متحرک کردیا ہے‘‘۔

ایلیٹ برائیڈی نے عرب ممالک کی جانب سے قطر کے بائیکاٹ کی حمایت کی تھی۔چار عرب ممالک سعودی عرب ، مصر ، متحدہ عرب امارات اور بحرین نے قطر پر مشرقِ وسطیٰ کو عدم استحکام سے دوچار کرنے اور دہشت گرد گروپوں کی مدد اور مالی معاونت کا الزام عاید کیا تھا اور اس بنیاد پر گذشتہ سال جون میں اس کا سفارتی ، سیاسی اور معاشی بائیکاٹ کردیا تھا۔

قطری حکام نے اس کے ردعمل میں مسٹر برائیڈی کے خلاف ایک مہم برپا کردی تھی اور ان سے متعلق من گھڑت دستاویزات تیار کی تھیں۔غیر قانونی طور پر ان کی بعض منتخبہ ای میلز حاصل کی تھیں اور ان کو کسی اجازت کے بغیر مختلف خبری اداروں سے وابستہ متعدد صحافیوں کو بھیج دیا تھا ۔اس تمام سرگرمی کا مقصد ان کی ساکھ کو نقصان پہنچانا تھا۔