.

روس کا مماثل جواب: 23 برطانوی سفارت کاروں کو ملک سے نکالنے کا فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روس کی وزارت خارجہ نے اعلان کیا ہے کہ وہ اپنے ملک سے 23 برطانوی سفارت کاروں کو نکال دے گی اور ملک میں برطانوی ثقافتی مرکز کو کام کرنے سے روک دیا گیا ہے۔ ماسکو کا یہ اقدام برطانیہ میں روس کے سابق ڈبل ایجنٹ سرگئی اسکریپل اور اس کی بیٹی کو زہر دیے جانے کے بعد لندن کی طرف سے 23 روسی سفارت کاروں کو ملک سے نکالنے کے فیصلے کے جواب میں سامنے آیا ہے۔

روسی وزارت خارجہ نے جس نے برطانوی سفیر کو طلب کیا تھا ہفتے کے روز جاری بیان میں بتایا کہ ماسکو میں برطانوی سفارت خانے کے عملے میں سے 23 ارکان کو ناپسندیدہ افراد قرار دیا گیا ہے اور انہیں ایک ہفتے کے اندر ملک سے نکال دیا جائے گا"۔ بیان میں مزید کہا گیا کہ روس میں برطانوی ثقافتی مرکز کی بے ضابطہ صورت حال کے باعث اس کی سرگرمیوں کو روک دیا گیا ہے۔

روسی خبر رساں ایجنسی "ٹاس" کے مطابق ماسکو میں برطانوی سفیر لوری بریسٹو کو رواں ہفتے آج دوسری مرتبہ وزارت خارجہ کے دفتر طلب کیا گیا۔