یمن: البیضاء صوبے میں تزویراتی ٹھکانے آزاد، حوثی کمانڈر ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

یمن میں سرکاری فوج نے جمعرات کے روز آئینی حکومت کی سپورٹ کرنے والے عرب عسکری اتحاد کی معاونت سے البیضاء صوبے کے شمالی ضلعے ردمان میں نئی تزویراتی ٹھکانوں کو آزاد کرا لیا۔

عسکری ذریعے کے مطابق یمنی فوج البیضاء کے شمالی علاقے "قانيہ" میں متعدد تزویراتی ٹھکانوں کا کنٹرول حاصل کرنے میں کامیاب ہو گئی۔

اس دوران اتحادی طیاروں نے السوادیہ ضلعے میں بھرپور فضائی حملوں کے ذریعے حوثی ملیشیا کی گاڑیوں ، جتھوں اور نقل و حرکت کو نشانہ بنایا۔ اس کے نتیجے میں باغیوں کو بھاری جانی نقصان اٹھانا پڑا اور ان کا ایک اسلحہ ڈپو تباہ ہو گیا۔

اتحادی طیاروں نے البیضاء صوبے کے علاقے جبل مسعودی میں بھی حوثی ملیشیا کے ٹھکانوں پر فضائی حملے کیے۔ کارروائی میں حوثی کمانڈر ابو الحسن الصعداوی مارا گیا۔ اس دوران یمنی فوج کے توپ خانوں نے جبل مسعودہ اور جبل العر کے علاقوں میں شدید گولہ باری کی جس کے نتیجے میں باغیوں کے ارکان ہلاک اور زخمی ہوئے اور ان کی عسکری گاڑیاں تباہ ہو گئیں۔

یمنی فوج نے تصدیق کی ہے کہ ردمان ضلعے میں "قانیہ" کے محاذ پر شدید جھڑپیں جاری ہیں۔ اس دوران یمنی فوج اتحادی طیاروں کی براہ راست معاونت کے ساتھ پیش قدمی کر رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں