گرفتار جنگجو نے حوثی لیڈرشپ کی دروغ گوئی کا پول کھول دیا

حوثی لیڈر قوم کو گمراہ کررہے ہیں: گرفتار جنگجو کا اعتراف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

یمن میں سرکاری فوج کے ہاتھوں گرفتارہونے والے ایک حوثی شدت پسند نے اپنی لیڈرشپ کے جعلی دعوؤں اور دروغ گوئی کا پول کھول دیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق یمنی فوج کے میڈیا سینٹر کی طرف سے ایک فوٹیج جاری کی گئی ہے جس میں حوثی جنگجو کو اعترافات کرتے سنا جاسکتا ہے۔ اتوار کے روز جاری کی گئی فوٹیج میں بتایا گیا ہے کہ جنگجو کو وسطی یمن کے البیضاء شہر میں قانیہ کے محاذ سے گرفتار کیا گیا۔

گرفتار جنگجو نے بتایا کہ حوثی قیادت لوگوں کو جنگ میں جھونکنے اور انہیں دھوکہ دینے کے لیے کذب بیانی کا مظاہرہ کرتے ہوئے عوام کو گمراہ کر رہی ہے۔

خیال رہے کہ قانیہ کے محاذ پر حوثی باغیوں کو غیرمعمولی جانی نقصان اٹھانا پڑا۔ یمنی فوج کی بھرپور کارروائی میں قانیہ کے مقام پر نہ صرف کئی حوثی جنگجو ہلاک اور زخمی ہوئے بلکہ متعدد کو حراست میں بھی لے لیا گیا۔

ادھر مغربی گورنری الجوف میں برط العنان ڈائریکٹوریٹ میں ہفتے اور اتوار کی درمیانی شب سرکاری فوج نے اہم پیش قدمی کرتے ہوئے متعدد مقامات باغیوں سے واپس لے لیے۔

الجوف میں آپریشن کے انجچار کرنل عبداللہ مطوان نے ’العربیہ‘ کو بتایا کہ یمنی فوج نے عرب اتحادی فوج کی معاونت سے برط العنان ڈائریکٹوریٹ کے پہاڑی سلسلے اور وادی القعیف میں تبہ ثوابنہ کا کنٹرول سنھبال لیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ برط العنان میں حوثی باغی تین اطراف سے گھیرے میں آگئے ہیں اور انہیں بھاری جانی نقصان بھی اٹھانا پڑا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں