.

’جیل کی سلاخوں کے پیچھے شادیانے‘

میکسیکو کی جیل میں 63 قیدی رشتہ ازدواج میں منسلک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

میکسیکو کی جیل میں حکام نے 63 قیدیوں کی اجتماعی شادی کی تقریب منعقد کرکے دلچسپ روایت قائم کی ہے جس پر ملک کے عوامی حلقوں اور سوشل میڈیا پر مسرت کا اظہار کیا گیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے بھی اس انوکھی اجتماعی شادی کی تفصیلات حاصل کی ہیں۔ اجتماعی شادی کے بندھن میں جڑنے والے قیدیوں میں بعض کو کئی سال کی قید کا سامنا ہے تاہم وہ رہائی اور خوش گوار زندگی کے لیے پرامید ہیں۔

سلاخوں کے پیچھے رشتہ ازدواج میں منسلک ہونے والے خورخی ارمانڈو کی شادی کورینا شاویز کے ساتھ کرائی گئی۔ دونوں سیوداد خواریتھ کی سینٹرل جیل میں بہت خوش نظر آ رہے تھے۔ حالانکہ37 سالہ ارمانڈو سات ماہ قبل بلیک میلنگ کے الزام میں 40 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

ارمانڈو اور کورینا کی ملاقات تین سال قبل امریکا میں ہوئی تھی جس کےبعد دونوں میں قربت بڑھتی گئی۔ وہ ہر بدھ اور ہفتے کے روز جیل میں اپنے ہونے والے شوہر سے ملاقات کرتی رہی ہے۔ اس جیل میں 3100 قیدیوں کو رکھا گیا ہے۔

قیدی سے شادی کرنے والی ایک خاتون نے اپنی شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ ’میں اس سے اور وہ مجھ سے محبت کرتا ہے‘۔ اس نے بتایا کہ میرے شوہر کو منشیات کے دھندے کے الزام میں دو سال قید کی سزا سنائی گئی ہے۔ توقع ہے کہ ہم دو سال کے بعد ایک ساتھ زندگی گذار رہے ہوں گے۔