وڈیو : بہادر خاتون نے لُٹیرے کو موت کی نیند سلا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برازیل میں ایک خاتون نے بہادری اور جرات مندی کا مظاہرہ کرتے ہوئے گولیاں مار کر ایک لٹیرے کو موت کی نیند سلا دیا۔ یہ واقعہ سان پاؤلو کے نزدیک واقع قصبےSuzano میں پیش آیا۔ تفصیلات کے مطابق مذکورہ شخص نے مدرز ڈے کے موقع پر ایک اسکول کی تقریب میں آنے والی خواتین کو سڑک پر لوُٹنے کی کوشش کی اور ان کے قبضے میں موجود مالی رقوم اور دیگر اشیاء حوالے کرنے کا مطالبہ کیا۔ اس موقع پر 42 سالہ خاتونKatia da Silva نے اپنے بیگ سے پستول نکالا اور اُس لٹیرے کو 3 گولیاں مار دیں جس کے نتیجے میں وہ سڑک پر ذبح شدہ مرغی کی طرح تڑپنے لگا۔ مقامی میڈیا کے مطابق واقعے کے سبب اسکول کے باہر موجود کم از کم 10 افراد شدید دہشت اور خوف کا شکار ہو گئے جن میں زیادہ تر خواتین اور بچے تھے۔

اسکول کے باہر نصب سکیورٹی کیمرے میں واقعے کی وڈیو محفوظ ہو گئی جس کے مطابق مقتول لٹیرے نے ماؤں کو دھمکیاں دیں تھیں کہ اگر انہوں نے بات نہ مانی تو وہ ان کے بچوں کو فائرنگ کا نشانہ بنائے گا۔ اس کے بعد "کاتیا" نے 21 سالہElivelton Moreira کے جسم میں تین گولیاں اتار دیں۔

واقعے کے بعد برازیل میں کاتیا کی بہادری کے چرچے ہو رہے ہیں۔ اتوار کو سان پاؤلو کے گورنرMarcio Franca نے اُس پولیس مرکز کا دورہ کیا جہاں کاتیا کام کرتی ہے۔ اس موقع پر کاتیا کو پھولوں کا گلدستہ اور اس کی دلیرانہ کارروائی کو خراج تحسین پیش کیا گیا۔ بعد ازاں گورنر نے اپنی ٹوئیٹ میں لکھا کہ "میں نے آج ایک خاص قسم کی ماں سے ملاقات کی جو پولیس میں کاتیا دا سیلوا کے نام سے معروف ہے۔ اس نے اپنی بہادری سے کئی ماؤں اور بچوں کو بچا لیا"۔

کاتیا گزشتہ 20 برس سے پولیس کے شعبے میں خدمات انجام دے رہی ہے اور اس کا شوہر بھی پولیس اہل کار ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں