.

سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات نےسرحدی چیک پوائنٹ پر لگی آگ پر قابو پا لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کی امدادی ٹیموں نے سرحد پر واقع البطحاء چیک پوائنٹ پر لگی آگ پر قابو پا لیا ہے۔

اس چیک پوائنٹ پر سعودی عرب کے ایک گودام میں مقامی وقت کے مطابق اتوار کی دو پہر ساڑھے بارہ بجے اچانک آگ بھڑک اٹھی تھی اور اس نے بہت جلد تمام گودام اور اس نزدیک کھڑی گاڑیوں ، کاروں اور ٹرکوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا اور آگ کے شعلے اور سیاہ دھویں کے بادل آسمان کی جانب بلند ہونے لگے۔

اطلاعات کے مطابق سرحدی چوکی کے نزدیک بہت سا آتش گیر مواد بیٹریاں ، کپڑے اور پینٹ وغیرہ موجود تھا ، اس کو فوری طور پر وہاں سے ہٹا دیا گیا اور وہاں موجود لوگوں کو بھی ایک محفوظ جگہ پر منتقل کردیا گیا ۔

ابو ظبی کی ایمر جنسی اور ڈیزاسسٹر مینجمنٹ ٹیم نے سعودی عرب کے حکام کو اس گودام میں لگی آگ پر قابو پانے میں مدد دی ہے۔

ابو ظبی پولیس کے کمانڈر انچیف اور ایمر جنسی اور ڈیزاسسٹر مینجمنٹ ٹیم کے چیئرمین میجر جنرل محمد خلفان الرمیثی نے آگ پر قابو پانے کے لیے اپنے کارکنان کی کارکردگی کو سراہا ہے اور کہا ہے کہ اس ہنگامی صورت حال میں اپنے بھائیوں کی امداد کے لیے ان کی ٹیم کی پیشہ ورانہ صلاحیتوں کی جانچ بھی ہوئی ہے۔

آگ لگنے کے بعد سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو پوسٹ کی گئی تھی ۔اس میں آگ بجھانے والے عملہ کے متعدد ارکان پانی سے آگ کے شعلوں پر قابو پانے کی کوشش کررہے تھے اور وہاں پانی کے ٹینکر کھڑے نظر آرہے تھے۔

سرحدی چیک پوائنٹ پر واقع ایک گودام میں آتش زدگی کے اس واقعے میں متعدد ٹرک ، درآمدی کاریں اور مختلف اشیاء جل گئی ہیں ۔ فوری طور پر آگ لگنے کی وجہ معلوم نہیں ہوسکی۔اس گودام کے قریب واقع شاہراہ پر تجارتی گاڑیوں کی آمد ورفت متاثر نہیں ہوئی تھی۔