.

برطانوی انٹیلی جنس میں پہلی مرتبہ مہاجرین کی اولاد بھرتی ہو گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانیہ کا انٹیلی جنس ادارہ MI6 (ایم آئی 6) پہلی مرتبہ مہاجرین کی نسل سے تعلق رکھنے والے افراد کو ادارے میں شمولیت کی اجازت دے گا۔ ادارے نے پہلی مرتبہ مرتبہ ٹی وی اشتہار بھی نشر کیا ہے۔

ادارے کے سربراہ ایلکس یینگر نے اس ضابطے کو منسوخ کر دیا جو اس بات کے متقاضی تھا کہ ادارے کے ملازمین کے والدین برطانوی ہوں۔ برطانوی انٹیلی جنس ادارے کی جانب سے آئندہ بھرتی کیے جانے والوں کے لیے صرف یہ مطلوب ہو گا کہ وہ برطانیہ میں پیدا ہوئے ہوں۔

برطانوی انٹیلی جنس ادارے نے بھرتی کی مہم شروع کی ہے جس میں ایسی خواتین کو مدّنظر رکھا گیا ہے جن کے بچّے افریقی نژاد ہیں۔ اس کا مقصد ادارے کے ملازمین میں نسلی تنوع کو بڑھانا ہے۔

یینگر نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ وہ اس موقع سے فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں تا کہ اس بیکار سے ضابطے کو ختم کیا جا سکے جو ابھی تک ممکنہ امیدواروں کو دور کرنے کا ایک بڑا سبب ہے"۔

یہ پیش رفت ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب مذکورہ انٹیلی جنس ادارے نے اپنی 109 سالہ تاریخ میں جمعرات کی شام پہلی مرتبہ ٹی وی اشتہار نشر کیا۔

اشتہار کا اختتام اس جملے کے ساتھ ہوتا ہے "ایم آئی 6... ہم مکمل طور پر آپ کی طرح ہیں"۔

ادارے کا مشہور ترین فرضی ایجنٹ انگریزی فلموں کا ہیرو جیمز بونڈ ہے۔