.

ریاست ورجینیا میں بکتر بند گاڑی چُرا بھاگنے والا امریکی فوجی گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کی ریاست ورجینیا میں فورڈ پکیٹ نیشنل گارڈ بیس سے ایک بکتر بند گاڑی چُرا کر بھاگنے والے فوجی کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

امریکی فوجی اڈے سے یہ بکتر بند گاڑی نکالنے کے بعد دو گھنٹے تک سڑکوں پر چلاتا رہا تھا ،حالانکہ اس کی زیادہ سے زیادہ رفتار 65 کلومیٹر فی گھنٹا تھی ۔اس کے باوجود بھی پولیس نے بڑی تگ ودو کے بعد اس پر قابو پایا ہے۔

فوجی بکتر بند گاڑی کو سڑکوں پر بھگانے کے بعد ریاستی دارالحکومت رچمنڈ میں ٹاؤن ہال کے سامنے آ کر رُک گیا تھا ۔وہاں پولیس نے اس کا گھیراؤ کر لیا اور اس کو موقع پر گرفتار کر لیا ہے۔بعض اطلاعات کے مطابق وہ نشے کی حالت میں تھا او ر گرفتاری کے بعد اس کا طبی معائنہ کیا گیا ہے۔

ورجینیا نیشنل گارڈ نے ایک بیان میں ملزم کا نام جوشوا فلپ یابٹ بتایا ہے۔اس کی عمر 29 سال ہے ۔ اس پر غیر مجاز فوجی بکتر بند گاڑی چلانے اور پولیس کو اپنے پیچھے بھگانے کے الزام میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔بیان کے مطابق اس نے منگل کی شام معمول کی تربیتی مشق کے دوران میں فوجی بکتر بند گاڑی چرائی تھی اور وہ اب واپس اڈے پر پہچش چکی ہے۔

پولیس ترجمان سارجنٹ کیلی ہِل نے بتایا ہے کہ اس بکتر بند گاڑی میں کوئی ہتھیار نہیں تھے۔چوری کی اس انوکھی واردات میں کسی کے زخمی ہونے یا کسی حادثے کی کوئی اطلاع نہیں ۔اس واقعے کے بعد سوشل میڈیا پر مختلف ردعمل کا اظہار کیا جا رہا ہے اور بعض لوگوں نے فوجی کی حرکت کو پاگل پن قرار دیا ہے۔