.

ورلڈ کپ فٹبال میچ نے مصری فنکار کی جان لے لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کا ایک نوجوان فنکار روس میں کھیلے جانے والے فٹبال ورلڈ کپ کے ایک میچ میں یوراگوائے کے مقابلے میں مصر کی شکست سے دلبرداشتہ ہو کر جان کی بازی گیا۔ تفصیلات کے مطابق 38 سالہ ماھر عصام اتوار کی صبح داعی اجل کو لبیک کہہ گیا۔ مرحوم جمعہ کے روز یوراگوائے کے ہاتھوں مصر کی عالمی فٹبال کپ میں شکست کے بعد شدید صدمہ سے دوچار ہوئے جس کے بعد ان کے دماغ کی شریان پھٹ گئی جس سے کومہ میں چلے گئے اور آج علی الصباح انتقال کر گئے۔

مصری فنکاروں کے سینڈیکٹ نے ایک پریس ریلیز میں بتایا کہ ماھر عصام کو جمعہ کے روز دماغ کی شریان پھٹنے کے بعد امبابا ہستپال پہنچایا گیا۔ بعد ازاں طبیعت زیادہ بگڑنے پر انہیں ایک دوسرے ہسپتال منتقل کیا گیا۔

مصری فنکار شریف ادریس نے بتایا کہ فٹبال کپ میں قاہرہ کی شکست کا غم ماھر عصام سے برداشت نہ ہو سکا اور اسی ذہنی دباو میں ان کے دماغ کی شریان پھٹ گئی۔ اس واقعہ کے بعد ادریس نے اپنے فیس بک اکاونٹ پر اس رائے کا اظہار کیا ہے کہ صحت کے مسائل سے دوچار افراد کھیل کے مقابلے دیکھنے سے گریز کریں تاکہ کسی شکست یا منفی ردعمل کی صورت میں صحت کے خطرات سے دوچار نہ ہوں۔

عصام کو اپریل 2014ء میں ایسی ہی صورتحال کا سامنا کرنا پڑا تھا، جس کے بعد وہ کئی ہفتے کومے میں رہے۔ عصام کی آخری رسومات اتوار کے روز ادا کی جائیں گی۔