یمنی فوج کا حوثی ملیشیا سے شدید لڑائی کے بعد الحدیدہ کے ہوائی اڈے پر قبضہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمنی فوج نے عرب اتحاد کی مدد سے حوثی ملیشیا کے خلاف شدید لڑائی کے بعد الحدیدہ کے ہوائی اڈے پر دوبارہ قبضہ کر لیا ہے۔

متحدہ عرب عرب امارات کی سرکاری خبررساں ایجنسی وام نے منگل کو ایک ٹویٹ میں اطلاع دی ہے کہ ’’ امارات کی مسلح افواج کی مدد سے یمنی مزاحمتی فوج الحدیدہ کے ہوائی اڈے میں داخل ہوگئی ہے‘‘۔

قبل ازیں یہ اطلاع سامنے آئی تھی کہ عرب اتحاد کی فوج ہوائی اڈے کے مرکزی کمپاؤنڈ میں داخل ہوگئی ہے۔

یمنی فوج کے ایک ذریعے اور علاقے کے ایک مکین نے بتایا تھا ’’ اتحادی فورسز نے ایران کے حمایت یافتہ حوثی شیعہ باغیوں کے خلاف شدید لڑائی کے بعد ہوائی اڈے پر دھاوا بول دیا ہے اور سرکاری فوجی اندرونی حصے میں پہنچ گئے ہیں‘‘ ۔

حوثی باغیوں کو اس لڑائی میں بھاری جانی نقصان اٹھانا پڑا ہے ۔عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے سوموار کو نیوز کانفرنس میں کہا تھا کہ حوثی ملیشیا جھوٹے پروپیگنڈے کے ذریعے اپنے جانی نقصان کو چھپانے کی کوشش کررہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ الحدیدہ شہر کو آزاد کرانے کے لیے لڑائی کے علاوہ صعدہ کے محاذ پر بھی حوثیوں کا بھاری جانی نقصان ہوا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں