.

حوثیوں کے زیر قبضہ بندر گاہ پر نقصان زدہ ترک بحری جہاز کی سعودی بندرگاہ جازان پر مرمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں حوثی شیعہ باغیوں کے زیر قبضہ بندرگاہ الصلیف پر گذشتہ ماہ لنگرانداز ہوتے وقت ایک پُراسرار دھماکے میں نقصان زدہ ترک بحری جہاز کی اس وقت سعودی عرب کی بندرگاہ جازان پر مرمت کی جارہی ہے۔

ترک بحری جہاز ’’انچ آئن بولو‘‘ سے گذشتہ ماہ الصلیف کی بندرگاہ پر گندم اتاری جارہی تھی۔اس دوران میں ایک دھماکا ہوا تھا جس سے اس جہاز کو شدید نقصان پہنچا تھا۔

تب اس جہاز کے کپتان نے عرب اتحادی فوج کے ایک جنگی بحری جہاز کو ہنگامی کال کی تھی اور اس سے مدد طلب کی تھی۔ کپتان نے بتایا تھا کہ جہاز کی بائیں طرف درمیان میں ایک سوراخ ہوگیا ہے۔

تب اتحادی فوج کے ایک ترجمان نے بیان میں بتایا تھا کہ ’’ اتحادی فورسز نے اس جہاز کا سروے کیا تھا اور انھیں یہ پتا چلا تھا کہ جہاز کے اندر سے باہر کی جانب ایک دھماکا ہوا تھا۔

تاہم ترجمان کے بہ قول جہاز کے کپتان نے اس نقصان اور دھماکے کے بارے میں لاعلمی ظاہر کی تھی اور یہ کہا تھا کہ اس کو اس واقعے کی وجوہ کا علم نہیں ہے۔اس کے بعد اتحادی فورسز نے اس جہاز کو ایک دوسرے جہاز کی مدد سے سعودی عرب کی بندرگاہ جازان منتقل کر دیا تھا جہاں اب اس کی مرمت کی جا رہی ہے۔