.

الحدیدہ بندرگاہ پر سات بحری جہازوں سے سامان اتار لیا گیا، سات باری کے منتظر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی آئینی حکومت کی بحالی کی کوششوں میں مصروف عرب اتحاد نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ الحدیدہ بندرگاہ پر بحری جہازوں سے سامان اتارنے کا عمل جاری ہے۔

گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران الحدیدہ بندرگاہ پر7 بحری جہازوں کو ان لوڈ کیا گیا جب کہ دیگر سات دوسرے اپنی باری پر سامان اتارنے کے لیے تیار ہیں۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ الصلیف بندرگاہ پر بھی ایک بحری جہاز کو خالی کرایا جا رہا ہے جس پر گندم لادی گئی ہے۔

ادھر ایک دوسرے سیاق میں عرب اتحاد کا کہنا ہے کہ حوثی باغیوں نے حوثی باغیوں نے G Muse نامی بحری جہاز دو ماہ سے زبردستی روک رکھا ہے۔