.

جرمن وزیر داخلہ نے مستعفی ہونے کا فیصلہ واپس لے لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جرمنی کے وزیر داخلہ ہورسٹ زیہوفر نے اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کی دھمکی واپس لے لی ہے۔ یہ فیصلہ پیر کے روز کرسچن ڈیموکریٹک یونین پارٹی کے ساتھ کئی گھنٹے تک جاری رہنے والی بات چیت کے بعد سامنے آیا۔ کرسچن پارٹی کی سربراہ جرمن چانسلر انگیلا میرکل ہیں۔

اس سے قبل زیہوفر نے دھمکی دی تھی کہ اگر میرکل نے آسٹریا کے ساتھ جرمنی کی سرحد کے نزدیک بعض مہاجرین کی واپسی کے بشمول پابندیاں قبول نہیں کیں تو زیہوفر وزیر داخلہ اور کرسچن سوشل یونین پارٹی کی سربراہی دونوں عہدوں سے مستعفی ہو جائیں گے۔

برلن میں کرسچن ڈیموکریٹک پارٹی کے صدر دفتر سے کوچ کرتے ہوئے زیہوفر نے صحافیوں کو بتایا کہ "کرسچن ڈیموکریٹک یونین اور کرسچن سوشل یونین دونوں پارٹیوں کے درمیان کثیر بات چیت کے بعد ہم جرمنی اور آسٹریا کے درمیان سرحد کے نزدیک مستقبل میں غیر قانونی مہاجرین کو روکنے کے طریقہ کار پر متفّق ہو گئے ہیں"۔