.

کیم جونگ ان سے مذاکرات کے لیے پومپیو جمعرات کو شمالی کوریا جائیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو پرسوں جمعرات کو شمالی کوریائی مرد آہن کم جونگ ان سے مذاکرات کے لیے شمالی کوریا پہنچ رہے ہیں۔

وائیٹ ہاؤس کی ترجمان سارہ سینڈرز نے ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ امریکی وزیرخارجہ کےشمالی کوریا کے دورے کا مقصد دونوں ملکوں کے درمیان بات چیت کوآگے بڑھانا اور پیانگ یانگ کو جوہری ہتھیاروں سے دست بردار کرنا ہے۔ اس سلسلے میں وزیرخارجہ مائیک پومپیو اعلیٰ اختیاراتی وفد کے ہمراہ پانچ جولائی جمعرات کے روز شمالی کوریا جائیں گے۔

گذشتہ جمعہ کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے شمالی کوریا کے جوہری ہتھیاروں کو ’غیر روایتی خطرہ‘ قرار دیا تھا۔ ان کے اس بیان کا مقصد شمالی کوریا پر عاید کردہ پابندیوں کو جواز فراہم کرنا تھا۔ امریکا نے شمالی کوریا پر یہ پابندیاں ٹرمپ ۔ کیم جونگ اون ملاقات کے محض 10 دن بعد عاید کردی تھیں۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریائی ڈکٹیٹر کم جونگ ان کے درمیان 12 مئی کو سنگا پور میں تاریخی ملاقات ہوئی تھی۔ سنگا پور سے واپسی پر صدر ٹرمپ کے کہا تھا کہ شمالی کوریا کی طرف سے اب واشنگٹن کو کوئی خطرہ نہیں رہا ہےْ

تاہم گذشتہ جمعہ کو صدر ٹرمپ نے کانگریس کےنام اپنے ایک پیغام میں مختلف انداز اور لہجہ اختیار کیا اور کہا کہ پیانگ یانگ پرعاید اقتصادی پابندیاں بدستور قائم رہنی چاہئیں کیونکہ شمالی کوریا کے جوہری ہتھیاروں کاخطرہ ٹلا نہیں ہے۔