’عن قریب سپاہِ پاسداران انقلاب امریکی بلیک لسٹ میں شامل ہوگی‘

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ ایرانی پاسداران انقلاب کو دہشت گرد تنظیموں کی فہرست میں شامل کرنے کا معاملہ وزارت خارجہ اور وائٹ ہاؤس کے زیرغور ہے۔ عن قریب سپاہ پاسداران انقلاب کو بھی دہشت گرد قرار دے کر بلیک لسٹ کردیا جائے گا۔

’ سی این این‘ سے بات کرتے ہوئے امریکی حکام نے کہا کہ پاسداران انقلاب پر پابندیوں کا معاملہ ٹرمپ انتظامیہ کے ہاں کئی ماہ سے زیرغور ہے۔ اور اس کے مختلف پہلوؤں کا جائزہ لیا جا رہا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو ذاتی طورپر پاسداران انقلاب کو دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کرنے کے حامی ہیں۔ امریکا اور ایران کے درمیان حالیہ کشیدگی میں اضافے کے بعد دو ماہ قبل امریکا نے پاسداران انقلاب کو دہشت گرد قرار دینے پرغور شروع کیا تھا۔

بلیک لسٹ کئے جانے کی صورت میں امریکا میں سپاہِ پاسدارن انقلاب کے تمام اثاثے منجمد، اس کے عہدیداروں پر سفری پابندی ہوگی اور ان کے خلاف فوج داری سزاؤں اور پابندیوں کا نفاذ اور دیگر اقتصادی پابندیوں کا نفاذ ممکن ہوسکے گا۔ امریکا میں انسداد دہشت گردی قانون مجریہ 1996ء کے تحت القاعدہ اور داعش جیسی تنظیموں کو اب تک دہشت گرد قرار دیا جا چکا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں