عن قریب 17 لاکھ شامی مہاجرین گھروں کو لوٹ جائیں گے: روس کا دعویٰ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

رُوسی وزارتِ دفاع نے دعویٰ کیا ہے کہ ان کی حکومت شام میں لڑائی کے دوران نقل مکانی کرنے والے شہریوں کی بحالی اور دوبارہ آباد کاری کے پروگرام پرکام کررہی ہے۔ عن قریب سترہ لاکھ شامی مہاجرین اپنے آبائی علاقوں کولوٹ سکیں گے۔ وزارت دفاع کا کہنا ہے کہ شامی مہاجرین کی علاقوں کو واپسی کے بارے میں تفصیلی معلومات اور تجاویز امریکا کو بھی مہیا کردی گئی ہیں۔

جُمعہ کو روسی وزارت اطلاعات نے وزارت دفاع کی طرف سے جاری بیان کے حوالے سے بتایا کہ ماسکو نے شامی پناہ گزینوں کی گھروں کو واپسی کے لیے تفصیلی تجاویز واشنگٹن کو ارسال کردی ہیں۔ ان پناہ گزینوں کی واپسی کے حوالے سے حال ہی میں صدر ولادی میر پوتین اور ڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان ہونے والی ملاقات میں اتفاق رائے کیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ امریکی اور روسی صدور نے گذشتہ سوموار کو فن لیںڈ کے صدر مقام ھلسنکی میں ملاقات کی تھی تاہم ان کے درمیان ہونے والی بات چیت میں شام کے بارے میں کسی اتفاق رائے کی تفصیلات سامنے نہیں آئیں، تاہم روسی وزرات دفاع کا کہنا ہے کہ امریکا کی کوششوں سے عن قریب سترہ لاکھ شامی شہریوں کو گھروں کو واپس بھیجا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں