روس، قزاقستان نے ایران سے اسٹیل کوائلز کی برآمدات معطل کردیں

ایران پر امریکی پابندیوں سے ایران کے حلیف بھی متاثر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسٹیل کے روسی تاجروں کا کہنا ہے کہ ایران پرامریکی پابندیوں کے نفاذ کے بعد روس اور وسطی ایشیائی ریاست قازقستان نے ایران سے اسٹیل کی گرم رولڈ کوائلز کی برآمدات معطل کردی ہیں۔

خبر رساں اداروں کے مطابق ماسکو کی طرف سے ایران پر امریکی پابندیوں پر اعتراض کے بعد روس کی کوشش ہے کہ امریکی پابندیوں سے اس کی کمپنیوں کے کاروبار پر منفی اثرات مرتب نہیں ہونے چاہئیں۔ روسی کمپنیوں کو خدشہ ہے کہ اگر اس نے امریکی پابندیوں کی خلاف ورزی کی تو وہ بھی پابندیوں کے دائرے میں آسکتی ہیں۔

خیال رہے کہ روس اور قازقستان سے حاصل کردہ گرم اسٹیل کوائلز لوہے کی پائپوں کی تیاری، گاڑیوں، زرعی آلات اور دیگر مقاصد کے لیے استعمال کی جاتی ہیں۔ امریکا کی طرف سے ایران پر عاید کردہ اقتصادی پابندیوں کے نتیجے میں نہ صرف اسٹیل کی مصنوعات کی قیمتوں میں کمی آئی ہے بلکہ طلب میں بھی غیرمعمولی کمی آئی ہے۔

روسی تاجروں کا کہنا ہے کہ امریکی کمپنیوں کی جانب سے ایران پر عاید کردہ پابندیوں کے باعث ایران کے ساتھ تجارتی معاملات میں سست روی کا سامنا ہے۔ قازقستان میں ٹیمر ٹاؤ کارخانے کے زیراہتمام روسسی کمپنیوں ’سیفر اسٹیل‘، ’ایم ایم کیے‘ نے ایران کے ساتھ لوہے کی تجارت کم کردی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں