مظاہرین کے مطالبات تسلیم نہ کرکے حکومت پشیمان ہو گی:السیتانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق کے سرکردہ شیعہ مذہبی رہ نما آیت اللہ علی سیستانی نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ اپنے بنیادی حقوق کے حصول کے لیے احتجاج کرنے والے شہریوں کے مطالبات تسلیم کرے۔ ان کا کہنا ہے کہ مظاہرین کے مطالبات تسلیم نہ کرکے حکومت شرمندہ ہوگی۔

اُنہوں نے احتجاجی مظاہرین کے لیڈرعبدالمہدی کربلائی پر زور دیا کہ وہ حکومت سے اپنے مطالبات منوانے کے لیے پرامن احتجاج کا راستہ اختیار کریں۔ ان کا کہنا ہے کہ اگر حکومت نے عوام کے جائز مطالبات تسلیم نہ کیے تواس کے نتیجے میں حکومت کو پشیمانی ہوگی اور پھر وقت ہاتھ سے نکل جائے گا۔

جُمعہ کے اجتماع سے خطاب میں علی السیتانی نے کہا کہ ملک میں جلد از جلد حکومت تشکیل دی جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ عراق میں حکومت کا سربراہ کوئی طاقت ور حوصلہ مند ہونا چاہیے۔ انہوں نے حکومت پر زور دیا کہ وہ عوام کے تمام جائز مطالبات جلد ازجلد پورے کرے۔

عراقی شیعہ رہ نما کا کہنا تھا کہ ہم نے پہلے بھی عادلانہ انتخابی قوانین کی تشکیل کا مطالبہ کیا۔ یہ اسی وقت ممکن ہے جب آزاد اور مکمل خود مختار الیکشن کمیشن کا قیام عمل میں لایا جائے۔ ہم حکومتی عہدیداروں کو ملک کے ابترحالات کو ٹھیک کرنے کے لیے ہمیشہ مشورہ دیتے رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں