عدن میں مسلح افراد کی فائرنگ سے یمنی انٹیلی جنس کا اعلیٰ افسر قتل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمن کے جنوبی شہر عدن کے وسطی علاقے خور مکسر میں نامعلوم مسلح افراد نے ایک انٹیلی جنس افسر کرنل ناصرمقریح الجعدنی کو فائرنگ کرکے قتل کردیا ہے ۔وہ عدن کے ہوائی اڈے پر تعینات تھے اور اتوار کو خور مکسر میں واقع باجنید مسجد کے بالکل سامنے ان پر حملہ کیا گیا ہے۔

عدن ائیرپورٹ پر تعینات ایک سکیورٹی ذریعے نے ان کی موت کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ کرنل ناصر الجعدنی کی نعش کو عدن کے ری پبلکن اسپتال میں منتقل کردیا گیا ہے۔

اس انٹیلی جنس افسر کے قتل سے قبل عدن میں متعدد سکیورٹی افسروں ، اہلکاروں اور ائمہ مساجد کو اسی طرح پُراسرار حالات میں قتل کیا جاچکا ہے اور سکیورٹی ادارے ان پر فائرنگ کرنے والے مسلح افراد کا سراغ لگانے میں ناکام رہے ہیں ۔ مسلح افراد سکیورٹی اہلکارو ں پر فائرنگ کے بعد فرار ہونے میں کامیا ب ہوجاتے ہیں۔

واضح رہے کہ یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی کی حکومت عدن ہی سے امور ِمملکت چلا رہی ہے اور اس نے اس شہر کو عارضی دارالحکومت قرار دے رکھا ہے جبکہ یمن کے اصل دارالحکومت صنعاء پر حوثی شیعہ باغیوں کا ستمبر 2014ء سے قبضہ چلا آرہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں