.

کچرے کی باسکٹ میں پھینکے گئے لاٹری ٹکٹ نے برطانوی جوڑے کو کروڑوں کا مالک بنا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسکاٹ لینڈ کے شہر ابارڈین کے نزدیک واقع ایک قصبے میں قسمت کے دھنی عمر رسیدہ جوڑے کو پھٹے ہوئے لاٹری ٹکٹ سے 5.8 کروڑ پاؤنڈ (7.5 کروڑ ڈالر) مل گئے۔

برطانوی اخبارات کے مطابق 67 سالہ برطانوی شہری فریڈ ہیگنز اور ان کی اہلیہ لیزلی ہیگنز اپنا لاٹری ٹکٹ چیک کروانے کے لیے مقامی اسٹور پہنچے تھے۔ لاٹری مشین چلانے والے نوجوان آپریٹر نے یہ کہتے ہوئے اُن کا ٹکٹ پھاڑ کر کچرے کی باسکٹ میں پھینک دیا کہ اس پر انعام نہیں نکلا ہے۔ تاہم مشین نے ایک تحریری پیغام نکالا جس میں کہا گیا کہ مذکوہ ٹکٹ کو سنبھال کر رکھا جائے۔

اسٹور کے معاون نگراں نے پھٹے ہوئے ٹکٹ کے ٹکڑے کچرے کی باسکٹ سے نکال کر واپس ہیگنز کو دے دیے۔ جمعرات کی صبح ہیگنز اور ان کی اہلیہ کو یہ ناقابل یقین خوش خبری ملی کہ اُن کے ٹکٹ نے 5 کروڑ 79 لاکھ 75 ہزار 367 پاؤنڈ کی انعامی رقم جیت لی ہے۔

ہیگنز کے مطابق لاٹری ٹکٹ دو حصّوں میں تقسیم تھا مگر اُس پر تمام نمبر واضح طور پر موجود تھے۔