.

ایران کے خلاف پابندیوں کا اطلاق کر کے رہیں گے: امریکی وزیر خارجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ امریکا کی جانب سے ایران کے خلاف "پابندیوں کا اطلاق" ہو گا۔

سنگاپور میں ایک سکیورٹی فورم میں شرکت کے بعد اتوار کے روز واشنگٹن واپسی کے دوران طیارے میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے پومپیو نے بتایا کہ وہائٹ ہاؤس کی جانب سے پیر کے روز ایک بیان جاری ہو گا جس میں تہران پر بعض پابندیوں کے دوبارہ عائد کیے جانے کی تفصیلات کا ذکر ہو گا۔

گرینچ کے وقت کے مطابق منگل کے روز 04:01 سے ایرانی حکومت کسی بھی قسم کے امریکی بینک نوٹ نہیں خرید سکے گی۔ علاوہ ازیں ایرانی صنعت پر وسیع پابندیوں کا نفاذ عمل میں آئے گا جس میں اُس کی قالین کی صنعت بھی شامل ہے۔

امریکی وزیر خارجہ نے واضح کیا کہ تہران پر دباؤ بڑھانے کا مقصد "ایران کی ضرر رساں سرگرمیوں کو روکنا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایرانی عوام اس بات پر ناخوش ہیں کہ اُن کی قیادت وہ اقتصادی وعدے پورے کرنے میں ناکام رہی جن کا اُن سے وعدہ کیا گیا تھا۔