.

یمنی فوج نے الحدیدہ کا ضلع الدریہمی مکمل آزاد کرا لیا، 100 حوثی جنگجو گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمنی فوج نے جنوبی صوبے الحدیدہ میں واقع ضلع الدریہمی کو حوثی ملیشیا کے خلاف شدید لڑائی کے بعد مکمل طور پر آزاد کرا لیا ہے۔

یمنی فوج کی عمالقہ میں دوسری بریگیڈ کے نائب کمان دار کرنل احمد الحجیلی نے اتوار کو ایک بیا ن میں بتایا ہے کہ الدریہمی شہر پر مختلف اطراف سے شدید حملہ کیا تھا اور اس کو حوثی ملیشیا کے قبضے سے مکمل طور پر چھڑوا لیا گیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ یمنی فوج سے شدید لڑائی کے نتیجے میں حوثی ملیشیا کا بھاری جانی نقصان ہوا ہے اور اس کے ایک سو جنگجوؤں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔یمنی فوج نے حوثیوں کے قبضے سے ہتھیار اور گولہ بارود بھی برآمد کر لیا ہے۔

انھوں نے یمنی فوج کی اس جنگی کامیابی کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا ہے کہ اس نے بیت الفقیہ نظامت اور دوسرے علاقوں سے الدریہمی کی جانب آنے والے کمک کے راستوں کو منقطع کردیا تھا جس کے بعد حوثی باغی محصور ہو کررہ گئے تھے اور انھیں لڑائی میں شکست سے دوچار ہونا پڑا ہے۔