.

امریکی پادری کا معاملہ ، ٹرمپ کے مشیر کی ترکی کے سفیر سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

وہائٹ ہاؤس کے ایک اعلان کے مطابق امریکا کی قومی سلامتی کے مشیر جون بولٹن نے پیر کے روز واشنگٹن میں ترکی کے سفیر سے ملاقات کی۔ اس دوران دونوں شخصیات کے درمیان انقرہ میں زیر حراست امیکی پادری کا معاملہ زیر بحث آیا۔

وہائٹ ہاؤس کی ترجمان سارہ سینڈرز کے مطابق ترک سفیر سردار قلیچ کی درخواست پر ہونے والی اس ملاقات میں امریکی پادری کے معاملے اور امریکا ترکی تعلقات کی صورت حال پر بات چیت ہوئی۔

امریکا کے بنیادی مطالبے یعنی پادری اینڈرو برینسن کی فوری رہائی پر زور دینے کے سبب دونوں ملکوں کے درمیان اختلاف جوُں کا تُوں باقی ہے۔

اگرچہ اس طرح کی رپورٹیں بھی ہیں کہ امریکا نے برینسن کی حوالگی کے لیے ترکی کے واسطے ایک حتمی وقت کا تعین کر دیا ہے تاہم امریکی ذمے داران کا کہنا ہے کہ اس سلسلے میں کوئی مہلت نہیں پائی جاتی۔

علاوہ ازیں ایسے آثار بھی نہیں ہیں کہ امریکا برینسن کے حوالے سے ترکی کے ساتھ مذاکرات کی تیاری کر رہا ہو۔

ترکی نے اکتوبر 2016ء میں امریکی پادری اینڈرو برینسن کو حراست میں لیا تھا۔ بعد ازاں وہ جیل سے باہر آ گیا اور پھر رواں سال جولائی کے اواخر میں برینسن کو اُس کے گھر میں نظربند کر دیا گیا۔