افغان دارالحکومت کابل میں خودکش بم دھماکا ، 48 افراد ہلاک ، 70 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

افغانستان کے دارالحکومت کابل میں بدھ کو ایک تعلیمی مرکز کے باہر خودکش بم دھماکے کے نتیجے میں 48 افراد ہلاک اور کم سے کم 70 زخمی ہوگئے ہیں۔

افغان حکام کے مطابق حملہ آور بمبار نے کابل کے مغرب میں واقع شیعہ آبادی والے علاقے میں خود کو دھماکے سے اڑایا ہے۔افغان وزارت صحت نے اس تباہ کن خودکش بم دھماکے میں 48 افراد کی ہلاکت اور 67 کے زخمی ہونے کی تصدیق کی ہے۔

فوری طور پر کسی گروپ نے اس خودکش حملے کی ذمے داری قبول نہیں کی ہے۔البتہ اسی علاقے میں سخت گیر جنگجو گروپ داعش نے ماضی میں بعض حملوں کی ذمے داری قبول کی تھی۔

دریں اثنا ء طالبان مزاحمت کاروں نے ایک بیان جاری کیا ہے اور اس میں انھوں نے اس بم دھماکے سے لاتعلقی ظاہر کی ہے۔واضح رہے کہ طالبان نے حالیہ ہفتوں کے دوران میں افغان فوج اور سرکاری اداروں کے خلاف حملے تیز کررکھے ہیں۔

افغان حکومت کو وسطی شہر غزنی میں طالبان کے ایک شدید حملے کے بعد سے دباؤ کا سامنا ہے۔غزنی میں گذشتہ پانچ روز سے جاری لڑائی کے نتیجے میں سیکڑوں شہری اور افغان سکیورٹی فورسز کے اہلکار ہلاک ہوچکے ہیں۔طالبان کے اس حملے کے بعد مغرب کے حمایت یافتہ افغان صدر اشرف غنی کی حکومت کو کڑی تنقید کا سامنا ہے اور یہ کہا جارہا ہے کہ وہ طالبان کے حملوں کے جواب میں امن وامان برقرار رکھنے کی صلاحیت کی حامل نہیں ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں