.

نئے ہفتے کے آغاز پر تُرک لیرہ کی قدر میں مزید 3% کی کمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ترکی میں مقامی مارکیٹ میں پیر کے روز تُرک لیرہ کی قدر میں امریکی ڈالر کے مقابل مزید 3% کی کمی آئی ہے۔ عید الاضحی کے موقع پر ایک ہفتے کی تعطیلات کے بعد اب سرمایہ کاروں کی توجہ ایک بار پھر انقرہ اور واشنگٹن کے بیچ جاری اختلاف پر مرکوز ہے۔ اس اختلاف کی وجہ ایک امریکی پادری ہے جس کو ترکی میں عدالتی کارروائی کا سامنا ہے۔

عالمی سطح پر ڈالر کی قدر میں اضافے کے ساتھ ہی ایک ڈالر 6.19 لیرہ کے مساوی ہو گیا۔ جمعے کے روز مارکیٹ بند ہونے پر ڈالر کی قیمت 6 لیرہ تھی۔

رواں برس کے آغاز سے اب تک امریکی ڈالر کے مقابل ترک لیرہ کی قدر میں 39% کے قریب کمی آ چکی ہے۔ امریکا اور ترکی کے درمیان تعلقات میں کشیدگی نے ترکی کی کرنسی کی گراوٹ میں اپنا کردار ادا کیا۔

اس صورت حال کے باعث ترکی کے صدر رجب طیب ایردوآن بھی تشویش کا شکار ہیں۔