شام : ایرانی وزیر دفاع کی حلب میں تہران نواز ملیشیاؤں کی قیادت سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

ایران کے وزیر دفاع امیر حاتمی نے اپنے ہمراہ مشیروں کے وفد کے ساتھ شام میں شمالی اور جنوب مغربی حلب کے متعدد مقامات کے دورے میں عسکری اور زمینی قیادت سے ملاقات کی جن میں ایران نواز ملیشیاؤں کے کمانڈرز اور ارکان شامل ہیں۔

یہ پیش رفت ایسے موقع پر سامنے آئی ہے جب دمشق میں ایرانی عسکری اتاشی ابو القاسم علی نجاد یہ اعلان کر چکے ہیں کہ رواں ہفتے تہران اور دمشق کے درمیان دستخط ہونے والے ایک دفاعی سمجھوتے کے تحت ایران کے عسکری مشیران شام میں رہیں گے۔ علی نجاد کے مطابق سمجھوتے پر عمل درامد اُس پر دستخط کیے جانے کے ساتھ ہی شروع ہو گیا۔ معاہدے میں شام کی جنگی صنعتوں کی تعمیر نو بھی شامل ہے۔

دوسری جانب اقوام متحدہ کی ترجمان نے بتایا ہے کہ شام کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی اسٹیفن ڈی میستورا نے امریکا، برطانیہ، سعودی عرب، اردن، مصر، جرمنی اور فرانس سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ آئندہ ماہ جنیوا میں مذاکرات کریں تا کہ بین الاقوامی تنظیم شام کے لیے نیا آئین وضع کرنے میں پیش رفت کو جاری رکھ سکے۔

مقبول خبریں اہم خبریں