سعودی ویژن 2030 ء کے تحت تین خواتین کا بلدیہ کے سربراہ کے طور پرتقرر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب میں حال ہی میں بلدیہ شریفیہ ، ضحبان اور ساحلی شہر جدہ میں خواتین کی بلدیہ شاخ کی مقرر کی گئی خاتون سربراہوں نے اپنے فرائض منصبی سنبھال کر کام شروع کردیا ہے۔انھوں نے منگل کو دفترمیں پہلے روز اپنے اپنے دائر ہ اختیار میں آنے والے علاقوں کے معائنے کیے ہیں اور بلدیاتی اداروں کی جانب سے مہیا کی جانے والی خدمات کا جائزہ لیا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ وہ بلدیہ کی خدمات کی ترقی پر اپنی توجہ مرکوز کریں گی تاکہ سعودی عرب کے ویژن 2030 ء میں وضع کردہ اہداف حاصل کیے جاسکیں۔

جدہ میں خواتین کی بلدیہ شاخ کی نئی سربراہ مریم ابو العینین کا کہنا ہے کہ ان کا کام دراصل بلدیہ کی جانب سے خواتین کو مہیا کی جانے والی خدمات ہی کی توسیع ہے۔ان کی شاخ جدہ میں کاروباری خواتین کو خدمات مہیا کرے گی ، انھیں تجارتی لائسنس جاری کرے گی اور خواتین کی تجارتی جگہوں کے معائنے کرے گی۔

خواتین کی نگران ٹیمیں کاروباری اداروں میں کام کرنے والی خاتون ورکروں کے صحت کارڈ کی بھی نگرانی کریں گی۔وہ مخصوص وردیوں میں ملبوس ہوں گی۔ اس وقت تک خواتین کی تجارتی فرموں کی تعداد پانچ ہزار کے لگ بھگ ہوچکی ہے۔

بلدیہ ضحبان کی سربراہ شادہ الموحنہ نے خود پر اعتماد کرنے پر حکام کا شکریہ ادا کیا ہے۔بلدیہ شریفیہ کی سربراہ ہبا البلووی کا کہنا تھا کہ ’’ ہم کارکردگی میں بہتری اور علاقے کے مکینوں کے مطالبات کو پورا کرنے کے لیے کوشاں ہیں‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں