.

امریکا: میری لینڈ میں عورت کی ادویہ کے تقسیمی مرکز پر فائرنگ ، تین افراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کی ریاست میری لینڈ میں واقع ہارفورڈ کاؤنٹی میں ایک مسلح عورت نے ادویہ کے ایک اسٹور کے تقسیمی مرکز پر فائرنگ کردی ہے جس کے نتیجے میں تین افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔پولیس حکام کے مطابق اس عورت نے خود کو بھی گولی مار لی تھی۔اس کو تشویش ناک حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں وہ دم توڑ گئی ہے۔

امریکی نشریاتی ادارے سی این این کے مطابق یہ عورت ادویہ کی تقسیم کار کمپنی رائٹ ایڈ کی عارضی ملازمہ اور سکیورٹی گارڈ کے طور پر کام کررہی تھی۔ اس کا کمپنی سے کسی معاملے پر تنازعہ چل رہا تھا۔

پولیس حکام کے مطابق فائرنگ کا یہ واقعہ میری لینڈ کے بڑے شہر بالٹی مور سے تیس میل شمال مشرق میں واقع ہار فورڈ کاؤنٹی میں ادویہ کی تقسیم کار کمپنی رائٹ ایڈ کے تقسیمی مرکز پر جمعرات کی صبح نو بجے کےبعد پیش آیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ فائرنگ سےدو افراد شدید زخمی ہوئے ہیں۔البتہ دو کی حالت بہتر بتائی گئی ہے۔

ہارفورڈ کاؤنٹی کے شیرف جیفرے گاہلر نے ایک نیوز کانفرنس میں بتایا کہ اس عورت نے فائرنگ کے لیے ایک دستی گن استعمال کی ہے۔اس نے لوگوں پر فائرنگ کے بعد خودکشی کی کوشش کی اور سر میں گولی مار لی لیکن وہ ناکام رہی اور خود پر ایک اور گولی چلا دی۔پولیس حکام نے اس کو حراست میں لے کراسپتال منتقل کیا تھا مگر وہاں وہ زخموں کی تاب نہ لا کر چل بسی ہے۔

رائٹ ایڈ کی خاتون ترجمان سوسان ہینڈرسن نے کہا ہے کہ کمپنی کے پیری میں واقع تقسیمی مرکز میں قریباً ایک ہزار ملازمین کام کرتے ہیں۔وہاں دوا ساز اداروں اور مینوفیکچرر سے آنے والی ادویہ اور دیگر مصنوعات وصول کی جاتی ہیں اور پھر انھیں آگے اسٹورز پر تقسیم کے لیے زیر عمل لایا جاتا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ فائرنگ کا واقعہ تقسیمی مرکز کی بنیادی عمارت سے متصل پیش آیا ہے۔

میری لینڈ میں فائرنگ کے اس واقعے سے ایک روز قبل ہی ریاست پنسلوینیا میں ایک مسلح شخص نے ایک عدالتی عمارت میں فائرنگ کردی تھی جس سے ایک پولیس افسر سمیت چار افراد زخمی ہوگئے تھے۔پولیس نے بعد میں اس مسلح شخص کو گولی مار کر ہلاک کردیا تھا۔