.

یمن: حجّہ اور صعدہ کے درمیان مرکزی شاہراہ پر سرکاری فوج کا کنٹرول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

العربیہ نیوز چینل کے نمائندے نے اتوار کے روز بتایا ہے کہ یمنی فوج نے عرب اتحاد کی معاونت سے ایک اہم بین الاقوامی شاہراہ پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔ یہ شاہراہ حجّہ صوبے سے شروع ہو کر مران سے گزرتی ہوئی صعدہ صوبے میں پہنچ کر ختم ہوتی ہے۔

نمائندے کے مطابق یہ راستہ ایک اہم تزویراتی گزرگاہ شمار کیا جاتا ہے کیوں کہ اس کے ذریعے محصور علاقوں تک امدادی سامان پہنچایا جا سکتا ہے۔ علاوہ ازیں یہ شہریوں کو یمنی فوج کے زیر کنٹرول علاقوں تک پہنچنے کا موقع بھی دیتا ہے۔

یاد رہے کہ یمنی فوج نے 19 ستمبر کو حوثیوں کے خلاف شدید لڑائی کے بعد وادی حرض اور اس کے نواح میں واقع دیہات پر کنٹرول حاصل کر لیا تھا۔

دوسری جانب یمن کی سرکاری فوج نے ’تعز‘ صوبے کے مشرقی ضلعے الصلو میں ایران نواز حوثیوں کے خلاف کارروائیوں میں باغیوں کو بھاری جانی اور مالی نقصان سے دوچار کیا۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ نے میدان جنگ سے اپنے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ یمن کی سرکاری فوج نے الصلو میں باغیوں کے ٹھکانوں پر تابڑ توڑ حملے کیے جس کے نتیجے میں باغیوں کو بھاری جانی اور مالی نقصان پہنچا۔ لڑائی میں کئی باغی ہلاک اور زخمی ہوئے جب کہ اسلحہ اور گولہ بارود کی بھاری مقدار بھی تباہ کر دی گئی۔

فوجی ذرائع کا کہنا ہے کہ جھڑپیں اس وقت شروع ہوئیں جب حوثیوں نے التشریفات کیمپ کی طرف بڑھنے اور وادی الصالہ میں ریپبلکن محل پر قبضے کی کوشش کی تھی۔

سرکاری فوج نے باغیوں کی پیش قدمی ناکام بناتے ہوئے انہیں بھاری جانی اور مالی نقصان سے دوچار کیا جس کے باعث باغی فرار پر مجبور ہو گئے۔