.

خاشقجی خاندان نے مذموم ایجنڈے کی مذمت کردی ، سعودی عرب پر اعتماد کا اظہار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے ساحلی شہر جدہ میں خاشقجی قبیلے کے ایک اجلاس کے بعد اس کے قانونی مشیر معتصم خاشقجی نے کہا ہے کہ ترکی میں لاپتا ہونے والے جمال خاشقجی کا خاندان مسلسل سعودی حکومت کے ساتھ رابطے میں ہیں۔

معتصم خاشقجی نے العربیہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’’ ہمیں سعودی حکومت کی جمال خاشقجی کے معاملے میں تمام کوششوں اور اقدامات پر اعتماد ہے۔حکومت اور انقرہ میں قائم سعودی سفارت خانے کے درمیان مسلسل رابطہ ہے لیکن بعض ممالک اس معاملے سے فائدہ اٹھا کر اپنا مذموم ایجنڈا آگے بڑھانے کے لیے کوشاں ہیں‘‘۔

انھوں نے کہا:’’ ہم الیکٹرانک میڈیا اور سنسنی پھیلانے والے خبری ذرائع کے مقاصد سے بخوبی آگاہ ہیں۔وہ اپنے منفی مقاصد کے لیے ہمارے ملک پر حملہ آور ہیں۔ہم ان لوگوں سے یہ کہنا چاہتے ہیں کہ وہ خاموش رہیں کیونکہ ان کے مذموم مقاصد اور ارادے ناکام ہوچکے ہیں‘‘۔

ترکی میں لاپتا سعودی شہری کے خاندان کی نمایندگی کرنے والے معتصم خاشقجی کا کہنا تھا کہ’’اب بہت سی جماعتیں اور لوگ اس معاملے کو سیاسی رنگ دینے کی کوشش کررہے ہیں اور وہ ان کے خاندان اور ان کے بھائی کا نام اپنے ایجنڈے کو آگے بڑھانے کے لیے ا ستعمال کررہے ہیں‘‘۔

انھوں نے وضاحت کی ہے کہ ’’خود کو خدیجہ کے نام سے متعارف کرانے اور جمال خاشقجی کی منگیتر قرار دینےوالی عورت کے بارے میں خاندان کو کچھ معلوم نہیں ہے کہ وہ کون ہے؟ وہ جمال کی منگیتر بھی نہیں ہے۔ہم یہ نہیں جانتے ہیں کہ وہ کہاں سے آئی ہے اور خاندان سے اس کا کوئی تعلق نہیں ہے۔اس کے بیانات اور قو نصل خانے میں اس کی موجودگی اس کے اپنےایجنڈے کے لیے بھی ہوسکتی ہے‘‘۔

معتصم نے بتایا ہے کہ ’’خاشقجی خاندان نے جمال کی گم شدگی کے بارے میں سعودی حکومت کے ساتھ مل کر قانونی چارہ جوئی شروع کردی ہے اور یہ تمام کارروائی قانونی فریم ورک کے تحت کی جارہی ہے۔انھوں نے من گھڑت اور جھوٹ پر مبنی رپورٹس کے بارے میں خبردار کیا ہے اور کہا ہے کہ ان میں کوئی سچائی ہے اور نہ ان کی کوئی ساکھ ‘‘۔

قانونی مشیر نے اپنے بیان کے اختتام میں کہا ہے کہ ’’ہم اس ملک کے بیٹے ہیں اور ہمیں اس مسئلے پر بھرپور توجہ دی گئی ہے‘‘۔

ترکی میں لاپتا سعودی شہری کے خاندان کے نمایندہ  معتصم خاشقجی
ترکی میں لاپتا سعودی شہری کے خاندان کے نمایندہ معتصم خاشقجی
جمال خاشقجی اور ان کی مبینہ منگیتر خدیجہ ۔
جمال خاشقجی اور ان کی مبینہ منگیتر خدیجہ ۔