.

ترکی خاشقجی کیس پر سعودی عرب سے تعلقات میں بگاڑ نہیں چاہتا : صدارتی ترجمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ترکی نے واضح کیا ہے کہ وہ استنبول میں سعودی قونصل خانے میں صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے واقعے پر سعودی عرب کے ساتھ تعلقات میں بگاڑ نہیں چاہتا ہے۔

صدارتی ترجمان ابراہیم کالین نے سوموار کے روز انقرہ میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’’ ابتدا ہی سے ہمارے صدر (رجب طیب ایردوآن) کی سمت بڑی واضح ہے اور وہ یہ کہ اس کیس میں کوئی چیز خفیہ نہیں رکھی جائے گی‘‘۔

انھوں نے کہا:’’ سعودی عرب ہمارے لیے ایک اہم ملک ہے،وہ ایک برادر اور دوست ملک ہے۔ہماری اس کے ساتھ بہت سی شراکت داری ہے اور ہم اس کو نقصان نہیں پہنچانا چاہیں گے۔ چناں چہ سعودی حکام پر بھی یہ بھاری ذمے داری عاید ہوتی ہے کہ وہ اس کیس پر روشنی ڈالیں ‘‘۔