.

صومالیہ میں "داعش" کے سربراہ کا نائب ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

صومالیہ میں انٹیلی جنس حکام کا کہناہے کہ شمالی صومالیہ میں سرگرم "داعش" کے سربراہ کا دست راست اور نائب مارا گیا۔

صومالیہ کے عہدیداروں‌نے نام ظاہر نہ کرنے شرط پر "اے پی" کو بتایا کہ مقتول دہشت گرد کی لاش گذشتہ ہفتے دارالحکومت موغا دیشو میں ساحل سمندرسے ملی تھی۔ وہ شہر میں خفیہ دورے کے دوران اغواء ہوگیاتھا۔

داعشی شدت پسند کی ہلاکت کے ذمہ داروں کا تعین نہیں کیا جاسکا۔ بعض ذرائع کا کہناہے کہ مقتول کے اقارب نے تنظیم ہی کے لوگوں پراس کےاغواء اور قتل کا الزام عاید کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق داعش کے مقامی حلیفوں کی طرف سے تنظیم کے سربراہ کی صحت کے بارے میں متضاد اطلاعات سامنے آتی رہی ہیں۔

خیال رہے کہ برطانوی انتہا پسند عبدالقادر مومن نے صومالیہ میں داعش کی بنیاد رکھی تھی۔ تنظیم کے نیٹ ورک میں دسیوں شدت پسندوں کی شمولیت کی اطلاعات ہیں۔ اس گروپ نے شمالی موغادیشو اور ملک سے باہر کئی حملوں کا اعتراف کیا۔ یہ گروپ شہریوں کو بلیک میل کرکے ان سے رقم بٹورنے میں بھی ملوث رہا ہے۔