انجیلا میرکل کے طیارے میں خرابی 'جی 20' اجلاس میں تاخیر کا موجب بنی!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جرمن چانسلر انجیلا میرکل طیارے میں تکنیکی خرابی کے باعث ارجنٹائن کے شہر بیونس آئرس میں ہونے والے"جی 20" اجلاس میں‌تاخیر سے پہنچیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق جرمن چانسلر اسپین کی "ایبیریا" فضائی کمپنی کے ایک طیارے پر میڈریڈ سے بوینس آئرس کے لیے روانہ ہوئیں مگر ان کے طیارے میں اچانک تکنیکی خرابی پیدا ہوئی جس کے نتیجے میں طیارے کی ہنگامی لینڈنگ کرنا پڑی۔ اس طرح وہ تاخیر سے جی 20 اجلاس میں ‌پہنچیں۔

ادھر جرمن حکام کا کہنا ہے کہ انجیلا میرکل کو ارجنٹائن لے جانے والے طیارے میں اڑان بھرنے کے بعد تکنیکی خرابی پیدا ہوئی تھی جس کے نتیجے ہنگامی لینڈنگ کرکے اس کی خرابی دور کی گئی۔

کمپنی کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے یہ طیارے نے مقامی وقت کے مطابق8:22 پر اڑان بھری مگر کچھ ہی دیر بعد طیارے میں فنی خرابی سامنے آنے پر اسے اتار لیا گیا تھا۔

جرمن چانسلر اور جرمن وزیر خزانہ اولاف شولٹس نے بوینس آئرس سے جمعہ کو رابط کیا اور اپنے جلد پہنچنے کی خبر دی تھی تاہم وہ اس وقت پہنچے جب اجلاس شروع ہوچکا تھا۔

جرمن فضائیہ کے حکام نے چانسلر کے طیارے میں خرابی میں مجرمانہ کارروائی کا امکان مسترد کردیا ہے۔

جرمن اخبار"رانچے پوسٹ" نے جمعہ کو سیکیورٹی ذرائع کے حوالے سے خبر دی تھی کہ تحقیق کار میرکل کے طیارے میں تاخیر کا سبب بننے والی خرابی کا جائزہ لے رہے ہیں۔ تاہم ابھی تک کسی کے پاس اس خرابی کے پیچھے کسی سازشی عنصر کا امکان سامنے نہیں آیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں