.

یمن کی قانونی حکومت کا بہت جلد الحدیدہ کی بندرگاہوں پر کنٹرول ہوگا: عرب اتحاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں حوثی شیعہ باغیوں کے خلاف برسرپیکار عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے کہا ہے کہ صدر عبد ربہ منصور ہادی کی قیادت میں قانونی حکومت کا بہت جلد الحدیدہ کی بندرگاہوں پر کنٹرول ہوجائے گا۔

انھوں نے سوموار کو ہفتہ وار نیوز بریفنگ میں کہا ہے کہ الحدیدہ شہر اور اس کی بند گاہوں پر کنٹرول کے حوالے سے اقوام متحدہ اور عالمی برادری سویڈن میں مذاکرات کے نتیجے میں طے شدہ سمجھوتے کے نفاذ کی ذمے دار ہے۔

کرنل ترکی المالکی نے کہا کہ اب عالمی برادری اس سمجھوتے پر عمل درآمد کے لیے حوثی ملیشیا کے عزم کی جانچ کررہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ حوثی باغی تمام محاذوں پر فوجی دباؤ پڑنے کے بعد مذاکرات کی میز پر آنے پر مجبور ہوئے ہیں۔

ترجمان نے واضح کیا کہ عرب اتحاد نے یمن میں جار ی بحران کے سیاسی حل کے لیے تمام کوششوں کی حمایت کا اظہار کیا ہے۔انھوں نے صحافیوں کو بتایا کہ مانیٹرنگ کمیٹیاں قائم کردی گئی ہیں اور وہ الحدیدہ سمجھوتے کی کسی بھی خلاف ورزی کی صورت میں رپورٹ کریں گی۔