.

سیف الاسلام قذافی کو لیبیا کی سیاسی سرگرمیوں‌ میں حصہ لینا چاہیے:روس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روس کی جانب سے لیبیا کے سیاسی امور میں مداخلت کا سلسلہ جاری ہے۔ روسی حکومت لیبیا کے مختلف دھڑوں میں مصالحت کی آڑ میں اپنی سرگرمیاں جاری رکھے ہوئے ہے۔‌حال ہی میں روسی حکومت کے ایک عہدیدارنے مقتول لیبی لیڈر کرنل معمرالقذافی کے بیٹے سیف الاسلام قذافی کو ملک کی سیاست میں سرگرم ہونے پر زور دیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق روس کی کوشش ہے کہ وہ لیبیا میں مصالحت کے بعدد آئندہ سال ہونے والے صدارتی انتخابات میں قذافی خاندان اور ان کے حامیوں میں میدان میں لانے میں کامیاب ہوجائے۔ روس کی طرف سے یہ بیان ایک ایسے وقت میں آیا ہے جب لیبیا میں جامع قومی کانفرنس کی تیاریاں جاری ہیں۔ اس کانفرنس میں دیگر قوتوں کے ساتھ قذافی خاندان اور ان کے حامی بھی نہ صرف شرکت کریں گے بلکہ اپنی خود کو ایک طاقت ور گروپ کے طورپر ظاہر کریں۔

سوموار کے روز روسی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا کہ سیف الاسلام القذافی کو ملک کی سیاست میں حصہ لینا چاہیے۔ وہ لیبیا کے جامع سیاسی عمل کا حصہ ہیں۔ روسی حکومت کا کہناہے کہ آئندہ سال ہونے والے صدارتی انتخابات سے قبل لیبیا میں قومی مصالحت کی کوششوں کے دورام کسی گروپ کو الگ تھلگ کرنے کی پالیسی مناسب نہیں۔

روس کی جانب سے قذافی خاندان اور ان کے حامیوں کی لیبیا کی سیاست میں شمولیت کی کوششیں ماسکو کی تزویراتی پالیسی کا حصہ ہے۔ مغربی قوتیں لیبیا میں قومی مصالحت اور امن کی آڑ میں اپنے اپنے حامی گروپوں کی حمایت کرتی چلی آ رہی ہیں۔ روس کا خیال ہے کہ سیف الاسلام قذافی کی شمولیت کےبغیر یمن میں نہ تو امن ہوسکتا ہے، نہ مصالحت اور نہ سیاسی استحکام کی راہ ہموار ہوسکتی ہے۔

روسی نیوز ایجنسی'سپوٹنیک' نے نائب وزیرخارجہ میخائل بوگدانوف کا ایک بیان نقل کیا ہے جس میں ان کا کہنا ہے کہ سیف الاسلام اور ان کے حامی قبائل لیبیا کی سیاست کا اہم جزو ہیں۔ انہیں ملک کے جامع سیاسی عمل میں حصہ ضرور لینا چاہیے۔ ان کے ساتھ ساتھ لیبیا کے طبرق، طرابلس اور مصراتۃ شہروں میں موجود سیاسی جماعتوں کو بھی مصالحتی اور سیاسی عمل میں ایک دوسرے کا ساتھ دینا چاہیے۔

تاہم روسی نائب وزیر خارجہ بوگدا نوف نے یہ نہیں بتایا کہ آیا ماسکو آئندہ سال ہونے والے صدارتی انتخابات میں سیف الاسلام کو صدارتی امیدوار بنانا چاہتا ہے یا روس کا مقصد سیف الاسلام کو صرف تنہائی سے نکال کر سیاست میں سرگرم کرنا ہے۔